آئی او سی میانمار میں مسلمانوں کے قتل عام پر آنکھیں کھولے : حافظ محمد ادریس

لاہور (خصوصی نامہ نگار) جماعت اسلامی کے مرکزی رہنما اور ڈائریکٹر ادارہ معارف اسلامی حافظ محمد ادریس نے جامع مسجد سید مودودی انسٹی ٹیوٹ میں خطبہ جمعہ کے خطاب میں کہا ہے کہ میانمار میں ظالم بدھ اکثریت مسلمان آبادیوں کو صفحہ ہستی سے مٹانے کے لئے ایڑی چوٹی کا زور لگا رہی ہے۔ میانمار کی حکومت کا طرز عمل انتہائی سفاکانہ و مجرمانہ ہے۔ ہمسائے مسلمان ملک بنگلہ دیش کے حکمران بھی میانمار مسلمانوں کے قتل میں برابر کے ذمہ دار ہیں۔ المیہ یہ ہے کہ عالمی ادارے تو اس ظلم وستم سے آنکھیں بند کئے ہوئے ہی تھے، او آئی سی اور مسلمان حکمران بھی تماش بین بن کر ظلم کی یہ بھیانک فلم دیکھ رہے ہیں۔ مسلمان ملکوں کو فی الفور او آئی سی کا اجلاس بلا کر ظالموں کے خلاف یک زبان اور دو ٹوک موقف اپنانا چاہئے۔ میانمار کے مسلمانوں پر آج زمین تنگ ہوچکی ہے۔ ان کی چیخ وپکاراور خون ناحق کے ساتھ سرد مہری کا رویہ امت مسلمہ اور مسلم حکمرانوں کو اللہ کے غضب کی طرف لے جا رہا ہے۔ خدا را اس ظلم کے خلاف ہر سطح پر اٹھ کر مظلوم کی مدد کیجیے۔