گوجرانوالہ، فیصل آباد، بصیرپور، وہاڑی ، پاکپتن میں خاتون اور4 لڑکیوں سے زیادتی

گوجرانوالہ +فیصل آباد+ بصیرپور(نمائندہ خصوصی+ نامہ نگاران) گوجرانوالہ ،فیصل آباد، بصیرپور اور وہاڑی میں خاتون اور 4 لڑکیوں سے زیادتی کی گئی۔ تفصیلات کے مطابق ورپال چٹھہ کی 15 سالہ (م) گھر میں اکیلی تھی اس کے چچازاد ذیشان نے ابے بیہوشی کی دوا پلا کر مبینہ زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا اور ملزم (م) کو حالت غیر ہونے پر سول ہسپتال میں چھوڑ کر فرار ہوگیا۔ فیصل آباد میں تھانہ صدر پولیس کو مقدمہ درج کرواتے چک نمبر 214 ر۔ب کی سرور بی بی نے بتایا ملزم فلک شیر نے میرے گھر گھس کر مجھ سے زیادتی کی۔ بصیرپور کے نواحی گائوں45 ڈی کی رہائشی 22 سالہ ’’ک‘‘پولیوکے باعث معذور تھی امین عرف مینا گھر میںداخل ہوگیا اور ’’ک‘‘کو ہوس کا نشانہ بنانے کے بعد فرارہوگیا۔ وہاڑی میں نوجوان لڑکی غلام فاطمہ نے اپنے والد کے ہمراہ پریس کانفرنس میں بتایا کہ تھانہ صدر وہاڑی کے سب انسپکٹر اور دیگر ملازمین بیس یوم تک حبس بے جا میں رکھ کر جنسی زیادتی کرتے رہے۔ علاوہ ازیں پاکپتن کے نواحی گاؤں سوچان کے باقر علی کی بیٹی شاہدہ سے گاؤں کے اوباش سیفل اور اس کے ساتھی نے زیادتی کی۔