ڈیرہ بگٹی: جھڑپ میں مزید 6 دہشت گرد ہلاک: پشاور میں کاروائی ، حملہ آور سمیت 2 مارے گئے

کوئٹہ+پشاور+مانسہرہ (نوائے وقت نیوز+ایجنسیاں) ڈیرہ بگٹی میں جاری سرچ آپریشن کے دوران جھڑپ میں مزید 6 دہشت گرد ہلاک ہو گئے، پشاور میں چیک پوسٹ کے قریب فائرنگ کی گئی، جوابی کارروائی میں اکی حملہ آور سمیت 2 افراد مارے گئے جبکہ 7 زخمی ہو گئے۔ مانسہرہ میں آپریشن کے دوران فائرنگ کے تبادلے میں ایک سکیورٹی اہلکار شہید ہوگیا جبکہ ایک اشتہاری ملزم بھی ہلاک ہوگیا۔ تفصیلات کے مطابق ڈیرہ بگٹی کے علاقے دریجن نالا اور رسم دربار میں ایف سی نے سرچ آپریشن کیا۔ ترجمان ایف سی کے مطابق آپریشن کے دوران ایف سی اہلکاروں اور دہشت گردوں میں فائرنگ کا تبادلہ ہوا۔ 6 دہشت گرد ہلاک ہوگئے، حملہ آور گیس پائپ لائن اور فورسز حملوں میں ملوث تھے۔ آپریشن میں ایف سی کے ایک ہزار اہلکاروں نے حصہ لیا۔ ایف سی ترجمان کے مطابق دہشت گردوں کی جانب سے خودکار اسلحہ اور راکٹ لانچرز بھی استعمال کئے گئے۔ اے ایف پی کے مطابق صوبائی وزیر داخلہ سرفراز بگٹی کا کہنا ہے کہ مارے جانے والے دہشت گردوں کا تعلق بلوچستان ریپبلکن آرمی سے ہے۔ حکام کا کہنا ہے کہ پشاور میںگورا قبرستان چیک پوسٹ کے قریب پیدل آنے والے دہشت گرد نے سکیورٹی اہلکاروں پر اچانک فائرنگ کر دی۔ فورسز کی جوابی کارروائی میں 2 حملہ آور ہلاک ہو گئے۔ فائرنگ سے چیک پوسٹ پر کھڑی مسافر ویگن میں سوار7 افراد زخمی ہوگئے جنہیں فوری طورپر لیڈی ریڈنگ ہسپتال منتقل کر دیا گیا۔ 2 زخمیوں کی حالت نازک بتائی جاتی ہے، زخمیوں کا کہنا ہے کہ واقعے کے بعد سکیورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا۔ ادھر متنی کے علاقے میں کالعدم تنظیم کے کمانڈر علی کو پولیس نے فائرنگ کے تبادلے کے بعد گرفتار کر لیا۔ دہشت گردکمانڈر دہشتگردی کی کئی وارداتوں میں مطلوب تھا اور اس کے سر کی قیمت پانچ لاکھ روپے مقرر تھی۔ دوسری جانب مانسہرہ میں اشتہاری ملزم کے خلاف سکیورٹی فورسز اور پولیس کے مشترکہ آپریشن میں ایک سکیورٹی اہلکار شہیدجبکہ دو پولیس اہلکار زخمی ہوگئے۔ فائرنگ کے تبادلے میں اشتہاری ملزم شہزاد مارا گیا۔ ادھر پشاور کے امن چوک کے قریب سکیورٹی فورسزکی چیک پوسٹ کے قریب فائرنگ کی گئی، جوابی کارروائی میں حملہ آور سمیت دو افراد ہلاک اور 7 زخمی ہو گئے۔ پولیس کے مطابق جمعرات کی صبح ساڑھے چھ بجے حملہ آور ایک مسافر وین میں سوار ہو کر ناکے تک پہنچا اور فائرنگ کی جس کے نتیجے میں ایک سکیورٹی اہلکار زخمی ہوا، فورسز کی جوابی کارروائی میں حملہ آور موقع پر ہی مارا گیا جبکہ مسافر وین کا ڈرائیور بھی جاں بحق ہوا۔ فائرنگ سے 7 افراد زخمی ہوئے جنہیں لیڈی ریڈنگ ہسپتال منتقل کر دیا گیا جبکہ زخمی اہلکار کو سی ایم ایچ پشاورمنتقل کیا گیا۔ ایس پی کینٹ کے مطابق حملہ آور ایک ہی تھا۔