گوجرانوالہ:نرس اور یونان پلٹ شخص کو ذبح کر دیا گیا، نعشیں مکان سے برآمد

گوجرانوالہ (نمائندہ خصوصی) نرس اور یونان پلٹ شخص کو ذبح کر دیا گیا۔ تھانہ جناح روڈ کے علاقہ لودھی ٹاﺅن کے ایک مکان سے مقامی ہسپتال کی نرس اور یونان پلٹ شخص کی ”شہ رگ“ کٹی نعشیں ملی ہیں جنہیں قبضہ میں لے کر ہسپتال پہنچانے کے بعد پولیس نے تفتیش شروع کردی ہے۔ ذبح کی جانے والی نرس نصرت المعروف نوشی ایک پرائیویٹ ہسپتال میں تعینات اور پسرور کے علاقہ بھگت پورہ کی رہائشی بتائی گئی ہے جس نے گزشتہ 10 ماہ سے لودھی ٹاﺅن میں مکان کرائے پر حاصل کرکے رہائش اختیار کر رکھی تھی جبکہ اسی مکان سے نوشی کے ساتھ جو دوسری نعش ملی وہ ڈسکہ کے رہائشی دو بچوں کے باپ اور گزشتہ ماہ ہی یونان سے واپس وطن آنے والے مبشر نامی شخص کی بتائی گئی ہے۔ مبشر اپنے ایک دوست غضنفر کے ہمراہ نوشی سے میل ملاقات کیلئے آیا ہوا تھا لیکن دونوں کو پہلے اینٹیں ماری گئیں اور بعدازاں دونوں کی شہ رگیں تیز دھار آلہ سے کاٹ دی گئیں۔ تاہم پولیس ذرائع اس سلسلے میں کوئی تفصیلات نہیں بتا رہے مگر پولیس نے مقتول مبشر کے دوست غضنفر کو حراست میں لے لیا ہے۔ علاوہ ازیں یہ بھی معلوم ہوا ہے مقتول مبشر کے پاس ”4 سو یورو“ کی رقم تھی شاید وہی رقم ان کی موت کا باعث بنی ہو۔ خیال ہے دونوں کو پہلے نشہ آور چیز کھلائی ہوگی اور بعدازاں انہیں راز فاش ہونے پر مار دیا گیا ہوگا۔