واپڈا کے ظلم سے بچایا جائے

مکرمی! آپ کے اخبار کے توسط سے وزیراعلیٰ پنجاب‘ چیف جسٹس ہائی کورٹ چیف جسٹس سپریم کورٹ اسلام آباد صاحبان اور چیئرمین واپڈا کی توجہ اس ظلم اور زیادتی کی طرف دلانا چاہتا ہوں۔ وارڈ نمبر 11 سرکلر روڈ پر 3 دکانیں ہیں ایک میں گولی ٹافی کی دکان ہے۔ ایک خالی اور ایک میں نائی ہے۔ ہمیں ہر مہینہ بل 5 سو 6 سو آنا تھا۔ واپڈا والوں نے ڈیڈ میٹر کا بل اگست میں 3029 روپے بل ڈال دیا ایس ڈی او صاحب کے پاس گئے تو انہوں نے کہا کہ بل ادا کر دیں۔ میٹر مفت لگا دیا جائے گا۔ ہم نے بڑی مشکل سے ادھار پکڑ کر بل ادا کر دیا ایک مہینہ چکر لگانے کے بعد میٹر لگ گیا اور ستمبر میں بل ہمیں 8410 روپے بھیج دیا گیا۔ ایکسین صاحب اور ایس ڈی او صاحب کے پاس بھی گئے ہیں لیکن کوئی انصاف نہیں مل رہا۔ واپڈا والوں کے بار بار تنگ کرنے پر ہم نے 2 قسطیں کروا کر ایک ادا کر دی ہے۔ اب اکتوبر میں ہمیں بل پھر 2764 روپے بھیج دیا گیا ہے۔ کبھی تو کہتے ہیں کہ کمپیوٹر نے بل ڈال دیا ہے۔ ہمیں 3 مہینوں کا بل 14203 روپے بھیج چکے ہیں۔ 3 مہینوں سے واپڈا والے ہمیں ذہنی طور پر ٹارچر کر رہے ہیں۔ ہمارے ساتھ انصاف کیا جائے اور ہماری جو رقم واپڈا کی طرف ہے۔ ہمیں واپس دلائی جائے اور ہمارا بل درست کیا جائے۔
(محمد نعیم اختر ۔ میٹر بنام (فیض الحسن صدیقی) وارڈ نمبر 11 سرکلر روڈ شاہ کوٹ ضلع ننکانہ صاحب) میٹر نمبر 5.24823 کھاتہ نمبر 08162105331004 موبائل نمبر 0308-4697746 )