تجدید ایمان کا موسم

ایڈیٹر  |  ڈاک ایڈیٹر
تجدید ایمان کا موسم

مکرمی! زندگی کی دوڑ میں تیزی سے آگے بڑھتی دنیا میں دن بدن تغیر اور تبدیلیاں رونما ہوتی رہتی ہیں۔ ہر چیز میں جدت آتی رہتی ہے۔ اسی طرح رب کائنات کے پیدا کردہ ایام میں بھی آئے دن تبدیلی دیکھنے کو ملتی ہے جوکہ فطری عمل ہے ہر سال جب بھی رمضان آتا ہے تو اہل ایمان کے ایمان تازہ ہو جاتے ہیں۔ اس لئے ہمیں نیکیوں کے اس موسم سے بھرپور استفادہ کرنا چاہئے تاکہ دوہری کامیابی کے حقدار ٹھہرائے جائیں۔ کوئی یتیم‘ کوئی مسکین‘ کوئی سفید پوش جو آپ کی توجہ کا منتظر ہے‘ ہرممکن کوشش کریں اس کی حاجت روائی ہو ۔کیا پتہ کونسی نیکی جو خلوص سے کی گئی ہو ہمیں وہ دلا دے جس کے ہم خواہشمند ہیں۔ آخر میں حکومت سے التماس ہے کہ اپنے گزشتہ ادوار کی طرح غریبوں‘ محتاجوں‘ بے سہارا افراد کی جس طرح وسیع پیمانے پر رمضان میں مدد کی جاتی تھی‘ اس دفعہ ایسی صورتحال نہیں۔ غریب ‘ محتاج اور بے سہارا افراد آپ کی مدد کے منتظر ہیں۔ ان پر خصوصی توجہ دیں جبکہ سستے رمضان بازاروں اور رمضان پیکج جیسے کام لائق تحسین ہیں جس سے لوگوں کی اکثریت مستفید ہو رہی ہے ۔ (تہمینہ شیر درانی۔ لاہور)