مکہ مکرمہ میں پاکستانی ہاؤس کی غفلت

ایڈیٹر  |  مراسلات

مکرمی! پاکستان سے فریضہ حج کے لئے مکہ مکرمہ سعودی عرب آنے والے پاکستانیوں کی رہنمائی اور سہولت کے لئے وزارت برائے مذہبی امور و حج حکومت پاکستان کی جانب سے حرم شریف خانہ کعبہ سے تقریباً دس منٹ کی پیدل مسافت کے فاصلہ پر ایک عالی شان سولہ منزلہ عمارت میں بیت پاکستان (پاکستان ہاؤس) قائم ہے۔ عمارت میں وزیراعظم پاکستان میاں نواز شریف اور صدر پاکستان ممنون حسین کے نمایاں پورٹریٹ تصاویر آویزاں کی گئی ہیں لیکن مقام صدر افسوس کہ بانی پاکستان قائداعظم محمد علی جناحؒ کی تصویر بھی موجود نہیں ہے۔ میں نے کاؤنٹر پر موجود ذمہ دار افراد کی توجہ اس جانب دلائی تو ان کا کہنا تھا کہ قائداعظمؒ کی تصویر یہاں کمپیوٹر سکرین پر لگائی گئی ہے۔ میں نے کہا کہ کمپیوٹر آن کرتے ہوئے قائداعظمؒ کی تصویر ہمیں بھی تو دکھا دیجئے!!! میرے کہنے پر ان افراد میں سے ایک شخص نے ایک دو بار کمپیوٹر کا بٹن دبایا لیکن سکرین پر قائداعظمؒ کی تصویر بالکل ظاہر نہ ہوئی۔ ہر ملک کا سفارت خانہ اور اس کے دفاتر اپنے اپنے ملک کے رہنماؤں اور جدوجہد آزادی اور اپنے اپنے محسن ملک کے تعارف کے لئے حتی الوسع اور بڑھ چڑھ کر کوشاں ہے لیکن مکہ مکرمہ میں واقع پاکستان ہاؤس کے ذمہ داروں کی اس غفلت اور بے خبری پر افسوس اور دکھ کا اظہار ہی کیا جا سکتا ہے!!! (پروفیسر محمد اسلم اعوان حال مقیم سعودی عرب مکہ مکرمہ برائے حج بلڈنگ نمبر105 سعودی عرب)