”ناقابل معافی جرم“

مکرمی ! حلقہ پی پی 225 چیچہ وطنی کے عام لوگوں نے پہلی دفعہ عوام میں سے اکثریت رائے سے جمہوری انداز میں ایک شریف و غریب موٹر مکینک کو الیکشن 2013ء میں امیدوارنامزد کیا۔ جس نے نہ بنکوں سے قرضہ لیکر معاف کروایا اور نہ ہی کسی سرکاری ادارے کا نادہندہ ہے۔ موٹر مکینک محمد عثمان کے کاغذات نامزدگی میں ذاتی اخراجات کاکالم سہواً خالی رہ گیا۔ چھان بین کی تاریخ پر بھی اس غلطی کی نشاندہی نہیں کی گئی جبکہ دوسرے ریٹرننگ آفیسروں نے امیدواروں کو ایسی غلطیاں درست کرنے کا موقع دیا لیکن ہمارے غریب مستری کے کاغذات اس بھول پر مسترد کر دیئے گئے۔ الیکشن ٹربیونل میں اس بھول کو معاف کرنے کی اپیل کی گئی ہے تو اس ٹربیونل نے بھی غریب مستری کی اپیل کو رد کر دیا۔ جناب ہم نے غریب اور متوسط طبقہ میں سے ایماندار حلال کی روزی کھانے والی قیادت الیکشن میں آگے لانے کی کوشش کی لیکن ایک فیصد سٹیٹس کو نے اس کوشش کو پہلے ہی مرحلہ میں ناکام بنا دیا۔(محمد آصف جاہ۔ چیچہ وطنی ضلع ساہیوال )