کمشنر ساہیوال ڈویژن کے نام

مکرمی! آپ نے کہا تھاظفر علی سٹیڈیم کی ادھوری تعمیر اور نئے پارک کی تعمیر موجودہ حالات میں ممکن نہیں کیونکہ ان منصوبوں کیلئے فنڈز کی ضرورت ہے جبکہ ملک بنیامین ہیلتھ کمپلیکس کو مجید امجد ہیلتھ کمپلیکس میں بدلنے کو آپ نے کہا کہ مجید امجد جیسے بڑے شاعر کیلئے کسی بڑے پراجیکٹ کی ضرورت ہے۔ ملک بنیامین ہیلتھ کمپلیکس جو کہ ڈسٹرکٹ اینٹی ٹی بی ایسوسی ایشن کے تحت چلایا جارہا ہے ملک بنیامین ہیلتھ کمپلیکس سے مجید امجد ہیلتھ کمپلیکس نام رکھنے میں فرعون یا قارون کے خزانے کی ضرورت نہیں صرف آپ کے ڈسٹرکٹ اینٹی ٹی بی ایسوسی ایشن کے نام ایک نوٹیفکیشن کے نام کی تبدیلی کی ضرورت ہے۔ساہیوال میں 66.7 ملین کی لاگت سے ایک جمنیزیم تعمیر کے آخری مراحل میں ہے اُسکا نام ابھی تجویز نہیں ہوا۔ آپ سے درخواست ہے کہ مجید امجد جیسے بڑے شاعر کیلئے اس جمنیزیم کا نام مجید امجد جمنیزیم رکھا جائے۔پچھلے دنوں پاکپتن بابا فرید شکر گنجؒ اور خواجہ عزیز مکیؒ کے مزارات پر حاضری دینے کا شرف حاصل ہوا۔ یہ جان کر بہت دکھ ہوا کہ زائرین سے جوتیوں کے ٹھیکیدار محکمہ اوقاف کی مقامی انتظامیہ کی ملی بھگت سے ایک جوڑے جوتا کے پانچ روپے وصول کر رہے ہیں جبکہ حکومت کا مقررکردہ ریٹ دو روپے فی جوڑا ہے۔ اس سلسلہ میں آپ اپنی اولین فرصت میں اس مجرمانہ فعل کا ہمیشہ ہمیشہ کیلئے قلع قمع کریں۔بس کنڈکٹر اکثر پنجاب روڈ ٹرانسپورٹ کے مقررکردہ کرایوں سے زیادہ چارج کرتے ہیں اور کبھی کبھار مسافروں اور بس کنڈکٹر کے درمیان گالی گلوچ سے لیکر ہاتھا پائی تک نوبت آجاتی ہے۔ اس پریکٹس کو کرایہ میں اوور چارجنگ روکنے کیلئے اپنے ماتحت تینوں اضلاع ساہیوال، پاکپتن اور بہاولنگر کے ہر چھوٹے بڑے بس سٹاپ پر ریلوے کی طرز پر کرایہ نامہ لکھوائیں۔ تاکہ مسافروں کو پنجاب روڈ ٹرانسپورٹ کے مقررکردہ کرایوں سے زیادہ کرایہ ادا نہ کرنا پڑے۔(رانا ریاض احمد … بانی قصویٰ عمرہ ٹرسٹ ساہیوال فون: 0321-6907357)