کراچی لہو لہو

مکرمی! کراچی لہو لہو ہے۔ شہر کی گلیوں‘ بازاروں میں بے گناہ لوگوں کا خون بہہ رہا ہے۔ جگہ جگہ قتل و غارت گری کی وارداتیں عام ہیں۔ کراچی کے عوام کی عزت و وقار تار تار ہے۔ پورا شہر تاریکی میں ڈوب چکا ہے۔ ہر طرف غنڈہ گردی کی فضا قائم ہے۔ لوگوں کا جینا مشکل بنا دیا گیا ہے۔ لوگ کراچی سے نقل مکانی پر مجبور ہو گئے ہیں۔ کراچی کے عوام پریشان اور بے حال ہیں مگر حکومت اپنے اتحادیوں کی پشت پناہی کر رہی ہے۔اگر اب کراچی کو کنٹرول نہیں کیا گیا تو کوئی بعید نہیں کہ لوگ حکومت کے خلاف اٹھ کھڑے ہوں۔ کراچی کے مسئلے پر فوری طور پر قومی کانفرنس بلانے کی ضرورت ہے۔
(شیخ امتیاز احمد منصورہ لاہور 0308-6950709)