زخمات مسلسل..............قصاب، یزید الفاظ ہم معانی

کیوں چھائی ہوئی ہے مرے یاں رات مسلسل..... ڈاکوں کی دھماکوں کی ہے برسات مسلسل
جو میرا محافظ ہے؟ اسے اپنی پڑی ہے...... خود وہ بھی مجھے دیتا ہے زخمات مسلسل
(ڈاکٹر خواجہ حمید یزدانی)
قصاب، یزید الفاظ ہم معانی
قصاب، یزید الفاظ ہم معانی ............ داستاں ظلم کی، لہو کی کہانی
ہتھیار بند لشکرِ یزید ہُوا جب ............ معصوموں کا ہوا قتل، جوانوں کی جوانی
ڈھائے ستم ایسے، پتھر بھی رو پڑے ................ کلیجے گئے پھٹ، پِتے ہوئے پانی
نام خوفناک، شمر، یزید، کربلا ............... دبدبہ ان کا، اب کدھر راجدھانی
مت رو شہیدوں کو محسن تُو یوں ............... بُلبُلیں بہشت کی، وہ مخلوق آسمانی
(محسن امین تارڑ ایڈووکیٹ)