اٹھیں اور پاکستان کو بچا لیں

مکرمی! سوال پیدا ہوتا ہے کہ طالبان کون ہیں کہاں سے آئے۔ پاکستان کو خصوصی طور پر کیوں حدف بنایا جا رہا ہے۔ طالبان کو رقوم اور جدید اسلحہ کون فراہم کر رہا ہے۔ ہماری ایجنسیاں اس قدر کیوں کمزور اور لاعلم ہیں کہ طالبان جہاں چاہیں‘ جب چاہیں کارروائی کر دیتے ہیں۔ مگر انہیں کوئی بروقت روک نہیں سکتا۔ پاکستان کئی سالوں سے اس عذاب میں مبتلا ہے۔ مسائل حل ہونے کا راستہ نظر نہیں آرہا ہے۔ ہر جگہ بے یقنی اور بدامنی کا عالم ہے۔ ہر شخص پریشانی کا شکار ہے۔ یہاں تک کہ ہم مسلمان ہو کر بھی اللہ کی رحمت سے مایوس ہیں۔ ہم مایوس کیوں نہ ہوں جبکہ ہم کوئی بھی مسلمانوں والے کام نہیں کر رہے۔ اسلام امن سکون اور بھائی چارے کا نام ہے مگر ایسی کوئی بات نہیں ہر شخص اپنی اپنی جگہ پر دوسرے شخص کا گلا اور جیب کاٹنے پر لگا ہوا ہے۔ کسی سے کسی کو کوئی ہمدردی نہیں۔ انسان اس وقت اس قدر ظالم بن چکا ہے جس کی مثال درندوں میں بھی نہیں ملتی۔ بے ایمانی‘ چور بازاری‘ لوٹ گھسوٹ ہمارا شیوہ بن چکا ہے کیونکہ ہم اللہ تعالیٰ کی نافرمان قوم بن چکے ہیں۔ لہٰذا ہم پر عذاب آنا یقینی ہے۔ جس کا کہ رب رحیم نے قرآن مجید میں صاف صاف فرمایا ہے اگر مسلمان اپنے ڈگر سے ہٹ گئے تو اللہ تعالیٰ مسلمانوں پر دوسری قوم مسلط کر دے گا۔ اب یہی وقت ہے پاکستان کے مسلمان جاگ اٹھیں اور پاکستان کے مستقبل کو بچا لیں۔ (ارشاد احمد … مریدکے 0346-4441709)