بک شیلف ……بقراط ۔۔ حیات‘ فلسفہ اور نظریات

ایڈیٹر  |  ڈاک ایڈیٹر

بک ہوم کے چیئرمین رانا عبدالرحمن نے عظیم عالمی فلسفیوں کے حیات‘ فلسفہ اور نظریات کے حوالے سے ایک سیریز کا اشاعتی پروگرام ترتیب دیا ہے۔ ’’بقراط: حیات‘ فلسفہ اور نظریات‘‘ اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے۔ بقراط‘ سقراط ہی کا ہم عصر تھا۔ بقراط نے اپنی سچائی کی بنیاد پر اپنے علم کو وسعت دی اور انسانی جسم کے افعال پر تحقیق علمی بنیادوں اور ٹھوس حقائق پر کی۔ بقراط نے واضح طور پر وہم کو علم سے الگ کر دیا تھا اور علم کی نیکی کی حقیقت کو پا لیا تھا۔ بقراط وہ اولین طبیب تھا جس نے کہا کہ توہم پرستی یعنی بدروحیں انسانی جسم میں بیماری پیدا نہیں کرتیں۔ ایسا سوچنا صرف وہم ہے۔ بقراط ہی وہ پہلا طبیب تھا جس نے ادویات کے اصول و قواعد کو فلسفے اور مذہبیات سے الگ کیا۔ بقراط وہ پہلا طبیب اور سرجن تھا جس نے انسانی جسم کی ٹوٹی ہوئی ہڈیوں کو جوڑنے کیلئے طبی قواعد و ضوابط اور آلات بنائے۔بقراط کا کہنا تھا کہ جس مرض کا سبب معلوم ہو جائے اس کی شفا بھی موجود ہوتی ہے۔ حالت صحت میں انسان درندوں کی غذا لیتا ہے جس وجہ سے انسان بیمار ہو جاتے ہیں تو میں ایسے بیماروں کو پرندوں کے موافق غذا دے کر صحت مند کر سکتا ہوں۔ ایم سرور نے اس کتاب کو دیدہ زیب انداز میں بک ہوم‘ بک سٹریٹ 46 مزنگ روڈ لاہور سے شائع کیا ہے۔ کتاب کی قیمت 200 روپے رکھی گئی ہے۔ فون نمبرز یہ ہیں۔ 042-37231518/ 37245072 (تبصرہ: تنویر ظہور)