کیا حکومت ہزاروں ہلاکتوں کی ذمہ دار ہے ؟

مکرمی ! جنوبی وزیرستان، ڈیرہ اسماعیل خان، مٹھی اور دیگر علاقوں میں طوفانی بارشوں کے سلسلے سے 25 لاکھ افراد متاثر ہو چکے ہیں۔ 1400 سے زائد ہلاکتیں ہو چکی ہیں، بند ٹوٹنے سے کوٹ ادو، تونسہ کی 50 سے زائد بستیاں زیر آب آ چکی ہیں۔ وزیراعظم اور وزیر اعلیٰ نے متاثرین سیلاب کے لئے فنڈ قائم کر دیتے ہیں ملازمین کی تنخواہ سے بھی کٹوتی کی جائے گی مگر یہاں ایک بات قابل غور بھی ہے اور قابل تفتیش بھی اور وہ یہ کہ ہمارے ملک میں اس وقت کم و بیس 18 حکومتی ادارے ہیں جو کسی نہ کسی طرح سے سیلاب سے تعلق رکھتے ہیں مگر اتنے ادارے ہونے کے باوجود کوئی جامع حکمت عملی سامنے نہیں آ رہی ۔(علی عمار ولد محمد اختر ۔ بارک 3B، چک 20 کیمپ جیل لاہور)