انڈر پارسز اور سڑک کی حالت زار

ایڈیٹر  |  ڈاک ایڈیٹر
انڈر پارسز اور سڑک کی حالت زار

مکرمی! میں اس خط کے ذریعے وزیراعلیٰ پنجاب کی توجہ دلاناچاہتا ہوں کہ لاہور کے وسط سے گزرنے والی نہر اس اعتبار نہایت اہمیت کی حامل ہے کہ اسکے اردگرد بنائے ہوئے انڈر پاسسز کی تعمیر سے ٹریفک میں بہت تیزی آچکی ہے۔ جہاں انڈر پاسز کی تعمیر قابل تعریف ہے وہاں ان کی مناسب دیکھ بھال نہیں کی جارہی۔ کیونکہ مال روڈ سے لے کر ڈاکٹر ہسپتال تک جتنے بھی انڈر پاس آتے ہیں انکے نیچے سڑک نہ صرف ناہموار اور خستہ حال ہے بلکہ جب تیز رفتاری سے موٹر سائیکل اور گاڑیاں گزرتی ہیں تو بے قابو ہونے لگتی ہیں جو اذیت اور حادثے کا باعث بنتی ہے اگر کوئی بس یا ٹرک انڈر پاس سے ٹکرا جاتا ہے تو دوبارہ ٹکرانے والی جگہ کو درست نہیں کیا جاتا۔ کیا انڈر پاسز کی دیکھ بھال کی ذمہ داری لاہور ڈویلمپنٹ اتھارٹی کی نہیں ہے سڑک کا نہر کی جانب دایاں حصہ انتہائی خراب ہے اسے بھی ٹھیک کرنے کی ضرورت ہے۔ مزید برآں نہر کے اردگرد جانوروںکا گوشت صدقے کے طور پر فروخت کرنیوالوں نے اپنا کاروبار خوب چمکا رکھا ہے اسے بھی روکنے کی ضرورت ہے۔(ایم اے لودھی، والٹن روڈ لاہور)