کیا قبروں کی تجارت جائز ہے؟

مکرمی! ایک آدمی نے زمین کا بہت بڑا قطعہ مسلمانوں کی تدفین کےلئے بطور قبرستان وقف کیا مسلمان اُس میں تدفین کرتے رہے۔ اب ایک عرصہ سے اُس قبرستان پر ایک شخص قابض ہو کر دفن کرنے والوں سے ہزاروں روپے لیتا ہے اور تدفین کی اجازت دیتا ہے، کیا وقف شدہ اس قسم کے قبرستان میں دفن کرنے والوں سے رقم کا مطالبہ جائز ہے؟ اور کیا وقف شدہ زمین کی تدفین کےلئے فروخت کرنا اور خرید ناجائز ہے؟ اُمید ہے کہ پاکستان کے جید علمائے کرام بندہ ناچیز کی تسّلی کیلئے جواب مرحمت فرمائیں گے۔مظفر اقبال ہاشمی 042-37634702