اس شکل کے بندے

مکرمی! بھارتی وزیر اعظم بھی چونکہ سردار ہیں‘ بارہ بجے والی کیفیت ان پر بھی طاری ہوتی ہے۔ کشمیر کے معاملہ پر ہندو آقاﺅں کو خوش کرنے کیلئے اول فول بکنا ان کی مجبوری ہے۔ اس لئے اگر وہ اس ضمن میں کوئی پھلجھڑی چھوڑیں تو اسے بھی لطیفے سے ہی تعبیر کیا جائے۔ ایسے ہی ایک سکھ سردار کے جب بارہ بجے تو گوروسے پوچھنے لگا کہ آپ سارا دن کیا کرتے ہیں‘ جواب آیا کہ بندے بناتا رہتا ہوں۔ سردار صاحب نے اپنا منہ آگے کر کے کہا کہ بندے اگر اس شکل کے ہی بناتا رہتا ہے پھر تو وقت ہی ضائع کرتا ہے۔ لہٰذا سردار صاحب سے بھی عقل کی بات کی توقع نہ رکھی جائے۔
(محسن امین تارڑ ایڈووکیٹ گکھڑ منڈی 0331-6442093)