جلاؤ گھراؤ تصادم کی پالیسی

ایڈیٹر  |  ڈاک ایڈیٹر
جلاؤ گھراؤ تصادم کی پالیسی

مکرمی! کسی بھی جمہوری ملک میں آزادی رائے کا حق ہر ایک کو حاصل ہے جمہوری ملک کے عوام کسی نا انصافی اصول کے خلاف احتجاج کرسکتے ہیں۔ جمہوریت کے نام پر بننے والے اس ملک میں بھی ڈکٹیٹرشپ زیادہ اور جمہوریت کم رہی ہے۔ سو جب جمہوریت ہوتی ہے تو اس ملک کی پڑھی لکھی عوام کو بھی درست طریقے سے احتجاج نہیں کرنا آتا۔ ہڑتالیں دھرنے جمہوریت کی خوبصورتی ہے سو ضرور کریں، پرتشدد احتجاج جمہوریت کے منافی ہے یہ محدود لیول کی ڈکٹیٹر شپ ہے کہ زبردستی قوم کی املاک کا نقصان کرنا پتھراؤکرنا، فائرنگ کرنا، عوام کو نقصان پہنچانا اور پولیس اور آرمی کو اس بات پر مجبور کرنا کہ جس اسلحے اور صلاحیت کا استعمال انہوں نے دشمنوں اور مجرموں پر کرنا ہو اس کا استعمال وہ پاکستان کے پڑھے لکھے لوگوں پر کریں۔ اس قسم کے احتجاج سے پاکستان کا ہی نقصان ہے۔ (ریحانہ سعیدہ، برنی روڈ گڑھی شاہو، لاہور)