آئین و ملک توڑنے والوں کیلئے اعزاز و اکرام کیوں؟

ایڈیٹر  |  مراسلات

مکرمی! کس قدر ظلم ہے کہ وطن مالوف میں جمہوریت کی بقا اور تسلسل کیلئے اگر کسی حلف کی خلاف ورزی کی گئی تو اس جرم کی سزا بے عزتی اور ”رگڑا“ مگر جنہوں نے آئین کو ”رگڑا“ ہی نہیں دیا بلکہ بار بار توڑا اور جنہوں نے ہوس اقتدار میں ملک ہی کو توڑ ڈالا ان کے لئے عزت و اعزازات۔ خدایا یہ کیسے تضادات ہیں؟ سمجھ نہیں آ رہا کہ کیا یہ ملک صرف غداروں اور بکاﺅ مال ملک دشمنوں کیلئے بنا ہے جو ان کی جنت بن گیا ہے؟ جنرل اسلم بیگ یا جنرل حمید گل اگر موقع پرست اور حریص اقتدار ہوتے تو جس کو اقتدار سے ہٹایا اسے پہلی دفعہ اقتدار دیتے ہی کیوں؟ یقینا اس وقت کی حکومت کے کارہائے نمایاں ہی دیکھ کر کچھ مجبور فیصلے کئے ہوں گے۔ اگر عوام دھوکہ کھا جائیں یا کوئی مداری اپنی چال میں کامیاب ہو کر چالاکی سے اقتدار پر قابض ہو جائے تو اس سے چھٹکارا کیونکر ممکن ہو گا۔ نظریاتی ریاست کی حفاظت کا فریضہ ایسے ہی افراد کے ہاتھوں تو انجام پاتا ہے۔ انہیں امریکی مفادات کی بھینٹ کیوں چڑھایا جائے۔
(میاں محمد رمضان، انجمن اصلاح ماحول)