قومی کرکٹ ٹیم کی پسپائی اور کھلاڑیوں کی لڑائی

ایڈیٹر  |  مراسلات

مکرمی! قومی کرکٹ ٹیم کی جنوبی افریقہ میں مسلسل ناقص کارکردگی کے پیچھے کیا عوامل ہیں تو اس میں پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین سے لے کر قومی سلیکشن کمیٹی ٹورنگ سلیکشن اور منیجمنٹ کمیٹی‘ انتخاب عالم‘ قومی کرکٹ کے بڑے میاں مصباح الحق اور سیاسی اوقات سے باہر ٹی ٹوئنٹی کے کپتان محمد حفیظ جنہوں نے اپنی مسلسل ماسوائے ٹی ٹوئنٹی کے واحد میچ کے ناقص کارکردگی کے باوجود ٹیم میں گروہ بندی کے موجود ٹیم کا برابر بوڑھے مصباح الحق‘ یونس خاں‘ عبدالرحمان‘ عمر گل‘ شاہد آفریدی‘ تنویر احمد‘ محمد حفیظ‘ عمر گل‘ اظہر علی‘ محمد عرفان‘ شعیب ملک اور ہمیشہ ہی ناقص کارکردگی کے حامل اکمل برادران پر کب تک اکتفا کیا جائے گا۔ ٹیم میں پلیر پاور جس کے سرغنہ محمد حفیظ ہیں ٹیم کا شیرازہ بکھیر دیا ہے۔ میں یہاں محمد حفیظ سمیت جنہوں نے بورڈ پر اپنی دماغی طاقت سے بورڈ کے تمام خواہ وہ کوچ ڈیوواٹمور ہوں یا معمولی کھلاڑی مکمل طور پر تسلط جما رکھا ہے۔ ان کو اور ان سمیت تمام سیاسی کھلاڑیوں سے پیچھا چھڑا کر ٹیم میں نئے کھلاڑی شامل کرنے چاہئیں۔ (طاہر شاہ سابق فرسٹ کلاس کرکٹر سابق منیجر کوچ سروس انڈسٹریز کرکٹ)