مادر ملت محترمہ فاطمہ جناحؒ

ایڈیٹر  |  مراسلات

آئین محبت تھی وہ دستور وفا تھی
پیغام اخوت تھی نگہ دار حیا تھی
قائد کی وہ کرتی رہی نگرانی ہمہ وقت
بھائی کا کبھی حوصلہ ہونے نہ دیا پست
تحریک وطن میں بڑا کردار تھا اس کا
تہذیب عمل سے بھی سروکار تھا اس کا
جو وقت دیا اس نے وہ بے لوث دیا تھا
جو کام کیا اس نے وہ بے خوف کیا تھا
رغبت تھی ہمیشہ اسے توقیر وطن سے
رہتا تھا لگا¶ اسے تزئین چمن سے
جیسے کبھی بھولے نہ ہمیں رہبر ملت
ایسے ہی ہمیں یاد رہے مادر ملت
قائد کے لئے فاطمہ امید کی ضو تھی
جس شب سے لڑائی تھی اسی شب کی وہ پو تھی
اس قوم کے ہر فرد کی وہ جا ن رہی ہے
اس دھرتی کے ہر ذرے کی پہچان رہی ہے
اے اہل وطن دل سے دعا دیجئے اس کو
مل جل کے تشکر کی صدا دیجئے اس کو
آفتاب ضیائ‘ اسلام آباد