صدارتی الیکشن کے نام پر ملک میں تماشہ کیا جا رہا ہے: ڈاکٹر قدیر

صدارتی الیکشن کے نام پر ملک میں تماشہ کیا جا رہا ہے: ڈاکٹر قدیر

لاہور(آئی این پی+ این این آئی) تحریک تحفظ پاکستان کے سربراہ و ایٹمی سائنسدان ڈاکٹر عبدالقدیر خان نے کہا ہے کہ ملک میں صدارتی انتخاب کے نام پر بھی تماشہ کیا جا رہا ہے، ہمارے ہاں پہلے کوئی غیر جانبدار صدر آیا اور نہ ہی اس کی امید ہے، پاکستانی سیاست میں ذاتی مفادات کیلئے اصولوں کا جنازہ نکال دینا کوئی نئی بات نہیں ایسا ہوتا رہتا ہے، گزشتہ روز تحریک رہنما ڈاکٹر دانش بلوچ سے ٹیلیفونک گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حکمران اقتدار میں آنے سے پہلے بہت سی باتیں کرتے ہیں لیکن جب یہ اقتدار میں آتے ہیں تو ان کو ایسا نشہ ہوتا ہے کہ یہ نظریے اور اصول کو بھول کر ذاتی مفادات کے تحفظ میں مصروف ہو جاتے ہیں اور آجکل بھی پاکستانی سیاست میں ایسا ہی ہو رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ جو بھی صدر آئے گا وہ وزیراعظم کی مرضی سے چلے گا۔ دریں اثناءایک انٹرویو میں ڈاکٹر عبدالقدیر خان نے کہا ہے کہ بد قسمتی سے ہمارے ہاں غلطیوں سے سبق سیکھنے کی کوئی روایت نہیں ‘یہاں صلاحیت کی بجائے وفاداریاں دیکھ کر عہدے دیئے جاتے ہیں اور یہی ہماری ناکامی کی سب سے بڑی وجہ ہے‘ مشرف نے ملک کے آئین کو توڑا لیکن اسکے ساتھ آج بھی نرمی برتی جارہی ہے اور وہ لگژری فارم ہاﺅس میں زندگی کے مزے لوٹ رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ میرے ساتھ کسی جماعت نے صدارتی امیدوار کیلئے رابطہ نہیں کیا۔ انہوں نے کہا کہ بجلی کے مسئلے کے لیے ابھی تک کسی نے کچھ نہیں کہا اگر بجلی کے مسئلے پر ہمیں اختیارات دیئے گئے تو اس مسئلے کو بھی حل کر دیں گے۔