بھارت کھلا دشمن ہے اس سے اچھے کی توقع رکھنا حماقت ہے: دفاعی تجزیہ کار

لاہور (خبرنگار+ نیوز رپورٹر) دفاعی تجزیہ نگار جنرل (ر) سعیدالظفر نے کہا ہے کہ بھارت ہمارا کھلا دشمن ہے۔ وہ ہمیں نقصان پہنچانے کا کوئی موقع ہاتھ نہیں جانے دیتا۔ جبکہ ہم بھارت سے دوستی کی خواہش لئے بھارت کے آگے پیچھے چکر لگا رہے ہیں۔ بدقسمتی سے ملک میں لیڈر شپ کا فقدان ہے۔ بھارت کی طرف سے کنٹرول لائن اور ورکنگ باﺅنڈری پر گولہ باری پر نوائے وقت سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ بھارت سے اچھے کی توقع رکھنا حماقت ہے۔ وہ کھلا دشمن ہے۔ ہم بھارت سے تجارت کے لئے بھارت کے آگے پیچھے پھر رہے ہیں جبکہ پاکستان میں ہر طرف بھارت سے سمگل ہو کر آنے والا سامان فروخت ہو رہا ہے۔ بھارت سے برابری کی سطح پر بات کرنی چاہئے۔ بدقسمتی یہ ہے کہ کشمیریوں پر مظالم بڑھتے جا رہے ہیں اور ہم خاموش بیٹھے ہیں۔ ہمارے امن و امان نافذ کرنے والے سول اور فوجی اداروں میں تھکاوٹ کے آثار نظر آنا شروع ہوگئے ہیں۔ جبکہ ہم اپنے ملک اور دین کو نقصان پہنچانے والے دہشت گردوں سے بات کرنا چاہ رہے ہیں۔ دہشت گردی کو کسی صورت برداشت نہیں کرنا چاہئے۔ دریں اثناءکشمیری رہنماﺅں عبدالرشید ترابی، نصیب گردیزی اور پیر عتیق الرحمن نے کہا ہے کہ حکومت پاکستان کی طرف سے مسلسل دوستی کی پینگیں بڑھانے کے بیانات نے بھارت کی حکومت کو شہ دی ہے کہ وہ جب چاہے پاکستان کی سرحدوں کی خلاف ورزی کرے اور افواج پاکستان کی طرف قدم بڑھائے۔ حکومت پاکستان کو اپنی خرجہ پالیسی پر نظرثانی کرتے ہوئے بھارت سے برابری کی بنیاد پر اور آنکھوں میں آنکھیں ڈال کر بات کرنا ہو گی۔ انہوں نے کہا کہ بھارت نے کئی بار بلاوجہ پاکستان فوجوں کی چوکیوں پر فائرنگ کی ہے۔ پاکستان کو کمزور نہ سمجھا جائے۔ پاکستان ایک ایٹمی طاقت ہے۔ بھارت کو منہ توڑ جواب دینا چاہئے۔
تجزیہ کار/ کشمیری رہنما