وفاق پنجاب میں مستقل گورنر تعینات کرکے 2 اپریل تک تحریری رپورٹ دے: لاہور ہائیکورٹ

وفاق پنجاب میں مستقل گورنر تعینات کرکے 2 اپریل تک تحریری رپورٹ دے: لاہور ہائیکورٹ

لاہور(وقائع نگار خصوصی) لاہور ہائیکورٹ نے وفاقی حکومت کو پنجاب میں مستقل گورنر کی تعیناتی کرکے 2 اپریل تک تحریری رپورٹ عدالت میں پیش کرنے کی ہدایت کی ہے۔ فاضل عدالت کے استفسار پر ڈپٹی اٹارنی جنرل نے بتایا کہ وزیراعظم گورنر کی تقرری کیلئے مشاورت کررہے ہیں۔ آئین کے آرٹیکل 41 کے مطابق 60 دنوں کی مدت ختم ہونے سے پہلے تقرری کردی جائے گی۔ گورنر کا عہدہ 29 جنوری کو خالی ہوا۔ جس پر جلد ہی مستقل تعیناتی کردی جائیگی۔ درخواست گزار محمد اظہر صدیق ایڈووکیٹ نے اپنے دلائل میں کہا کہ گورنر کا عہدہ آئینی ہے کسی بھی آئینی عہدے کو غیر معینہ مدت تک خالی نہیں رکھا جاسکتا۔12 کروڑ عوام میں سے گورنر کیلئے حکومت کو کوئی اہل شخص ہی نہیں مل رہا۔ اس عہدے پر تعیناتی میں تاخیر سے حکومتی ساکھ متاثر ہورہی ہے۔ حکومت کی طرف سے آئینی مدت کے اندر گورنر کی تعیناتی کی یقین دہانی پر فاضل عدالت نے 2 اپریل تک سماعت ملتوی کرتے ہوئے تحریری رپورٹ طلب کرلی۔