دہشت گردی کے نام پر دینی مدارس کو بدنام کرنا غیر ملکی ایجنڈا ہے: ساجد میر

لاہور (خصوصی نامہ نگار) مرکز ی جمعیت اہل حدیث پاکستان کے سربراہ پروفیسر ساجد میر نے کہا ہے کہ قانونی تقاضے پورے کرنے والے غیر ملکی طلبہ کو دینی مدارس سے نہ نکالا جائے، اگر دنیاوی علوم کے لیے باہر سے طلبہ آسکتے ہیں تو دینی تعلیم کے لیے کیوں نہیں۔ جہاں تک کسی طالب علم کی مشکوک سرگرمیوں کا تعلق ہے تو ان کی مانیٹر نگ کاٹھوس میکانزم بنانا حکومت اور سیکورٹی اداروںکا کام ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ دہشت گردی کے نام پر دینی مدارس کو بدنام کرنا غیر ملکی ایجنڈا ہے۔ انہوں نے کہا کہ لاﺅڈ سپیکر کا ناجائز استعمال نہیں ہو نا چاہیے ۔محض مسلکی تعصب کی بنیاد پر انتظامیہ اور بعض پولیس اہلکار علماءکے خلاف مقدمات درج کرارہے ہیں جو ناقابل برداشت ہے۔