کربلا حادثہ نہیں حق و باطل کے درمیان جنگ کا نام ہے: راغب نعیمی

لاہور(خصوصی نامہ نگار)جامعہ نعیمیہ کے ناظم اعلیٰ اور نائب ناظم اعلیٰ تنظیم المدارس اہل سنت پاکستان مولانا راغب حسین نعیمی نے یوم عاشورہ کے موقع پرگذشتہ جامعہ نعیمیہ میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ امام حسین کی تعلیمات کو عام کر کے دہشت گردی کی لعنت سے چھٹکارا ممکن ہے لہذا ضروری ہے کہ حکومتی سطح پر سیدنا امام حسین کی تعلیمات کو فروغ دیا جائے تاکہ سیدنا امام حسین کی خدمات کو فروغ دے کر نوجوان نسل کو جہاد اور فساد کا فرق بتایا جائے انہوں نے کہا کہ امام حسین رضی اللہ تعالیٰ عنہ نے میدان کربلا میں یزید کا مقابلہ کر کے جہاد کے ذرےعے فسا د کا خاتمہ کیا۔ واقعہ کربلا حادثے کا نام نہیں ہے بلکہ حق وباطل کے درمیان ازل سے جاری اصولی اختلافات پر ڈٹ جانے کا تسلسل ہے کیونکہ قانون قدرت کے مطابق حق اور باطل کی جنگ ہمیشہ جاری رہی ہے اور رہے گی انہوں نے کہا کہ اسلام صرف زبان سے کلمہ پڑھنے کا نام نہیں ہے بلکہ حق کی خاطر جہاد میں غازی یا شہید ہونے کا نام ہے اور اسی عظیم مقصد کے لےے سیدنا امام حسین اور ان کے ساتھیوں نے کربلا کی جنگ میں جام شہادت نوش کر کے اسلام کا ”علم “بلند کر دیا۔