لاہور کی مقامی عدالت نے زہریلے شربت سکینڈل کے تین ملزمان کو چار روزہ جسمانی ریمانڈ پر شاہدرہ پولیس کے حوالے کردیا۔

لاہور کی مقامی عدالت نے زہریلے شربت سکینڈل کے تین ملزمان کو چار روزہ جسمانی ریمانڈ پر شاہدرہ پولیس کے حوالے کردیا۔

ٹائنو نامی کھانسی کا زہریلا سیرپ اب تک سترہ انسانوں کو موت کی نیند سلا چکا ہے، پنجاب حکومت اور ضلعی انتظامیہ نے کریک ڈاؤن کرکے سیرپ فروخت کرنے اوربنانے والوں کوگرفتارکیا ہے۔ آج عبدالرؤف، رضوان اور فدا نامی ملزمان کو ضلع کچہری میں جوڈیشیل مجسٹریٹ وسیم انجم کے روبرو پیش کیا گیا۔ دوران سماعت شاہدرہ پولیس کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا کہ تینوں ملزمان سے اہم تفتیش کرنی ہے جبکہ اس افسوسناک واقعہ کی انکوائری بھی جاری ہے جس کےلیے ملزمان کا جسمانی ریمانڈ دیا جائے۔ عدالت نے مختصر سماعت کے بعد تینوں ملزمان کو چار روزہ جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا۔