مسلم ٹاﺅن پولیس کے مبینہ تشدد سے ٹیچر جاں بحق، ورثاءکا مظاہرہ

لاہور (نامہ نگار) تھانہ مسلم ٹاﺅن میں مبینہ پولیس تشدد سے 46سالہ استاد جاں بحق ہو گیا۔ پولیس کے مطابق اس کی ہلاکت دل کا دورہ پڑنے سے ہوئی ہے۔ پولیس تشدد سے رانا اشرف کی ہلاکت پر ورثاءاور اہل علاقہ نے شدید احتجاج کیا۔ لواحقین کے مطابق بتایا جاتا ہے کہ گلشن راوی جی بلاک کا رہائشی 46سالہ رانا اشرف ٹیچر تھا اور پرائیویٹ اکیڈمی چلاتا تھا۔ اس کے خلاف ظفر اقبال نامی شخص نے کچھ عرصہ قبل 50ہزار روپے مالیت کے چیک ڈس آنر کا تھانہ مسلم ٹاﺅن میں مقدمہ درج کرایا تھا۔ گزشتہ روز پولیس نے اس کے گھر چھاپہ مارا اور اسے گرفتار کرکے تھانہ مسلم ٹاﺅن میں لے آئے جہاں پولیس نے اسے مبینہ طور پر تشدد کا نشانہ بنایا۔ جس سے رانا اشرف موقع پر ہی دم توڑ گیا۔ پولیس کے مطابق ملزم کو تھانے آتے ہی سینے میں درد ہوا اور وہ زمین پر گر پڑا۔ جس کے باعث اس کو طبی امداد کیلئے ہسپتال لے جایا گیا مگر وہ جانبر نہ ہو سکا۔ اسکی موت دل کا دورہ پڑنے سے ہوئی ہے۔