ریمنڈ ڈیوس کیس: سی آئی اے نے پاکستان مےں اپنے آپریشنز کم کر دیئے

لاہور (اشرف جاوید / دی نیشن رپورٹ) امریکی وزیر خارجہ ہلیری کلنٹن جھوٹ بول رہی ہےں کہ امریکہ نے سی آئی اے کے کنٹریکٹر ریمنڈ ڈیوس کی رہائی کےلئے کوئی دیت ادا نہیں کی۔ دی نیشن کو باخبر ذرائع نے بتایا کہ دونوں مقتولین (فہیم اور فیضان) کے ورثا کو دیت کی رقم امریکی حکومت نے فراہم کی۔ وزارت داخلہ کے ذرائع نے بتایا کہ امریکہ کا یہ دعویٰ کہ ریمنڈ ڈیوس کو سفارتی استثنیٰ حاصل ہے وہ غلط ثابت نہیں ہوسکا۔ امریکی صدر نے اس حوالے سے ان امریکیوں کو مطمئن کرنے کےلئے جھوٹ بولا جو کہ پاکستان مےں سنگین جرائم مےں ملوث ہےں۔ ذرائع کے مطابق ریمنڈ ڈیوس کی رہائی کے بعد سی آئی اے کے جاسوسوں کی سرگرمیوں کی کڑی نگرانی کی جس کے بعد سی آئی اے نے پاکستان کے اندر اپنے آپریشنز کم کر دیئے ہےں۔ حکومت اور ملٹری اسٹیبلشمنٹ کے اندرونی ذرائع کے مطابق اس ساری صورتحال نے پاکستان امریکہ تعلقات کو ایک نئی جہت دی ہے، امریکہ نے یقین دلایا ہے کہ اس کا ایک محدود عملہ سفارتخانوں کی سکیورٹی کی خاطر موجود رہے گا۔ ان ذرائع کے مطابق ریمنڈ ڈیوس کے حوالے سے فیصلے اعلیٰ سیاسی سطح پر قومی مفادات کو مدنظر رکھ کر کئے گئے بعض عناصر اس حوالے سے غلط فہمیاں پھیلانے مےں مصروف ہےں کہ فوج یا آئی ایس آئی نے ڈیل کی کوئی راہ ہموار کی، ایسی خبریں بالکل بے بنیاد ہےں۔