سراج الحق کی پیسکو چیف سے ملاقات، خیبر پی کے کو بجلی کا اصل حصہ دینے کا مطالبہ

سراج الحق کی پیسکو چیف سے ملاقات، خیبر پی کے کو بجلی کا اصل حصہ دینے کا مطالبہ

لاہور (خصوصی نامہ نگار) امیر جماعت اسلامی کے امیر سراج الحق نے کہا ہے کہ خیبر پی کے میں بجلی کی پیداوار ملک کے باقی صوبوںکی نسبت سب سے زیادہ ہے مگر بجلی کی پیداوار کے فوائد سے صوبہ کے عوام محروم ہیں اور لوڈشیڈنگ کا عذاب سب سے زیادہ خیبر پی کے کے عوام کو جھیلنا پڑ رہا ہے، صوبے میں بجلی کی پیداوار کا فائدہ عوام کو نہ پہنچانا سراسر زیادتی ہے جو کسی صورت بھی برداشت نہیں کی جائے گی۔ پشاور میں پیسکو کے چیف سے ملاقات میں امیر جماعت اسلامی نے مطالبہ کیا کہ صوبے بھر میں واپڈاکی مس مینجمنٹ کو فوری طور پر دور کیا جائے اور خیبر پی کے کے عوام کو بجلی فراہمی میں ان کا اصل حصہ مہیا کیا جائے۔ سراج الحق نے کہا کہ رمضان المبارک میں ملک بھر کے عوام واپڈا کی وجہ سے سخت عذاب کا شکار ہیں اور ان کے صبر کا پیمانہ لبریز ہو چکا ہے۔ وزیر اعظم نے رمضان سے قبل سحری اور افطاری میں لوڈشیڈنگ نہ کرنے کے جو خوش کن اعلان کئے تھے ان پر ایک دن کیلئے بھی عمل نہیں ہوا۔ حکومتی وعدوں اور اعلانات پر عمل نہ کرنے سے عوام اور حکمرانوں کے درمیان عدم اعتماد پیدا ہوتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دیر اور مالا کنڈ ڈویژن میں عوام کی طرف سے بجلی کے بل ادا کرنے کی شرح ملک بھر میں سب سے زیادہ ہے اور ان علاقوں میں لائن لاسز بھی ملک کے دیگر حصوں کی نسبت کم ترین ہیں۔ لیکن اس کے باوجود یہاں کے عوام کو رمضان المبارک میں لوڈ شیڈنگ کی چکی میں پیس کر رکھ دیا گیا۔ انہوں نے پیسکو چیف کو توجہ دلائی کہ جماعت اسلامی سے تعلق رکھنے والے ارکان اسمبلی نے اپنے علاقوں کیلئے ٹرانسفارمرز اور کھمبوں کیلئے پیسے بھی جمع کروائے ہوئے ہیں لیکن انہیں سامان دینے سے لیت و لعل سے کام لیا جارہا ہے جس کا خمیازہ عوام کو بھگتنا پڑرہا ہے۔