شمالی وزیرستان آپریشن، طالبان محفوظ مقامات پر منتقل ہوچکے ہیں: شاہ عبدالعزیز

لاہور (نیوز ڈیسک) جے یو آئی (س) کے مرکزی رہنما شاہ عبدالعزیز نے تکبیر سے انٹرویو کے دوران کہا ہے کہ شمالی وزیرستان میں آپریشن شروع کرکے حکومت نے نہ ختم ہونیوالی جنگ کا آغاز کردیا جس کا فائدہ افغانستان اور بھارت کو ہوگا۔ گزشتہ چند روزہ حملوں میں کوئی طالبان کمانڈر اور دہشت گرد نہیں مارا گیا بلکہ صرف عورتیں، بچے اور بے قصور نوجوان مر رہے ہیں۔ تکبیر کو سوالوں کے جواب دیتے ہوئے شاہ عبدالعزیز کا کہنا تھا کہ مذاکراتی ٹیمیں کامیابی کے آخری مراحل میں تھیں کہ حکومت کی طرف سے یکدم خاموشی اختیار کرلی گئی، حکومت نے پیچھے ہٹ کر اپنے منصب کی توہین کی۔ ہماری اطلاعات کے مطابق شمالی وزیرستان سے طالبان مکمل طور پر علاقہ چھوڑ کر محفوظ مقامات پر منتقل ہوچکے ہیں۔ تحریک طالبان تو ساتوں ایجنسیوں میں موجود ہے تو کیا تمام میں آپریشن کرنا ہوگا اور حکومت یہ بوجھ اٹھا سکے گی۔ ایک سوال کے جواب میں کہا کہ میرانشاہ کے اوپر کے علاقوں سے ہزاروں قبائلی افغانستان کی طرف ہجرت کررہے ہیں اور انہیں باقاعدہ خوش آمدید کہا جارہا ہے، خدشہ ہے یہ لوگ انکے ہتھے نہ چڑھ جائیں۔ انہیں ہمارے خلاف استعمال بھی کیا جاسکتا ہے۔ آپریشن سے امن ہرگز نہ ہوگا۔ طالبان اب بھی مذاکرات کیلئے تیار ہیں۔ تحریک انصاف سے یہ توقع نہ تھی کہ وہ آپریشن کا مطالبہ کرے گی۔ انہوں نے کہا نواز شریف کو کام کرنے کا موقع دینا چاہئے۔ طاہر القادری ، چودھری برادران اور شیخ رشید کو کچھ نادیدہ قوتیں آگے بڑھا رہی ہیں۔
شاہ عبدالعزیز