پی پی 150: میاں مرغوب کی محض 376 ووٹوں کی برتری سے فتح پر لوگ دنگ رہ گئے

لاہور (خصوصی رپورٹر) لاہور سے ضمنی انتخابات میں صوبائی حلقہ پی پی 150 میں مسلم لیگ (ن) کے امیدوار میاں مرغوب احمد 18 ہزار 870 ووٹ لے کر بمشکل کامیاب ہوئے۔ ان کے قریبی حریف تحریک انصاف کے امیدوار مہر واجد عظیم نے 18 ہزار 494 ووٹ حاصل کئے۔ حکومتی پارٹی مسلم لیگ (ن) کے امیدوار میاں مرغوب احمد جوکہ مسلم لیگ (ن) لاہور کے صدر و جنرل سیکرٹری رہنے کے علاوہ اس حلقہ انتخاب سے 2008ءمیں رکن قومی اسمبلی بھی رہ چکے ہیں۔ ان کی محض 376 ووٹوں کی اکثریت سے جیت پر لوگ دنگ رہ گئے۔ تاہم اس کم مارجن سے جیت کی وجوہات پر نظر ڈالیں تو پہلی بات یہ سامنے آتی ہے کہ اس حلقہ انتخاب میں برادری ازم نے کام دکھایا۔ تحریک انصاف کے امیدوار مہر واجد عظیم جوکہ الیکشن 2013ءمیں بھی الیکشن لڑے اور 34 ہزار 219 ووٹ حاصل کئے، ان کے مقابلے میں جیتنے والے ان کے کزن مہر اشتیاق احمد نے 67 ہزار 282 ووٹ لئے تھے لیکن ضمنی الیکشن میں ”مہر برادری“ نے کوشش کی کہ اپنی برادری کے مہر واجد عظیم کو بھی اسمبلی میں پہنچایا جائے۔ برادری کے اکثر ایسے لوگوں نے بھی مہر واجد عظیم کو ووٹ ڈالا جنہوں نے الیکشن 2013 میں ووٹ مہر اشتیاق احمد کو دیا تھا۔ دوسری وجہ یہ بنی کہ پیپلز پارٹی کے امیدوار آصف شاکر عین الیکشن والے دن تحریک انصاف کے امیدوار مہر واجد عظیم کے حق میں دستبردار ہوگئے۔ اگرچہ آصف شاکر نے الیکشن 2013 لڑتے ہوئے محض 3 ہزار 805 ووٹ حاصل کئے تھے لیکن ضمنی الیکشن والے دن ان کا الیکشن سے دستبردار ہوکر تحریک انصاف کے امیدوار کے ساتھ جانا پی ٹی آئی کے لئے نفسیاتی برتری کا باعث بنا۔ تیسرے ضمنی الیکشن میں ووٹنگ کی شرح عام انتخابات کی نسبت کم رہی۔ عام انتخابات میں 99 ہزار 990 ووٹ ڈالے گئے تھے جبکہ ضمنی الیکشن میں 37 ہزار 598 ووٹ ڈالے گئے۔