اقلیتیں پاک فوج کے ساتھ کھڑی ہیں: آل پاکستان مینارٹیز الائنس

لاہور (خصوصی نامہ نگار) آل پاکستان مینارٹیز الائنس (APMA) لاہور کے زیراہتمام سانحہ پشاور کے شہداء کی یاد میں سٹنرل چرچ وارث روڈ میں ایک تعزیتی ریفرنس Candlelight کا انعقاد کیا گیا جس میں سیاسی، مذہبی ودیگر شعبہ ہائے زندگی کے لوگوں نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔ دعائیہ عبادت کی قیادت سینئر پاسٹر عمانوائیل کھوکھر نے کی۔ مقررین میں الائنس کی وائس چیئر پرسن/ سابق رکن اسمبلی مسز نجمی سلیم، ہارون سلیمان ایڈووکیٹ، پاسٹر عمانوائیل کھوکھر، عبداللہ ملک، نوید واسطی، جوزف پال، شفیق بھٹی، نعیم جان، شہباز سندھو سمیت دیگر لوگ شامل ہیں۔ اس موقع پر مقررین نے پشاور میں آرمی پبلک سکول میں ہونے والی دہشت گردی کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ دہشت گردوں نے معصوم بچوں کو شہید کر کے بربریت اور گھنائونے جرم کا ارتکاب کیا ہے جوکہ دراصل انسانیت کے خلاف جرم ہے جس پر تاریخ انہیں کبھی معاف نہیں کرے گی۔ مقررین نے شہدائے پشاور کے لواحقین سے اپنے گہرے رنج وغم کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ہم ان کے غم وسوگ میں برابر کے شریک ہیں۔ مقررین نے مزید کہا کہ پاک فوج نے دہشت گردوں کے قلع قمع کیلئے جو ضرب عضب آپریشن شروع کیا ہے اس پر تمام اقلیتیں پاک فوج کے شانہ بشانہ کھڑی ہیں۔ مقررین نے کہا کہ آل پاکستان مینارٹیز الائنس کے چیئرمین ڈاکٹر پال بھٹی نے پشاور کے اندوہناک واقعہ پر پہلے ہی ’’ہفتہ سوگ‘‘ اور کرسمس کے حوالے سے تمام تقریبات کو منسوخ کرنے کا اعلان کیا ہے اس لیے تمام مسیحی بر ادری کرسمس کا تہوار انتہائی سادگی کے ساتھ منائے گی۔