”قادیانی جماعت کی جانب سے 1984ءکے آرڈیننس کو امتیازی قرار دینا آئین کی خلاف ورزی ہے“

لاہور (خصوصی نامہ نگار) عالمی مجلس تحفظ ختم نبوت کے امیر مرکزیہ مولانا عبدالمجید لدھیانوی، نائب امراءمولانا ڈاکٹر عبدالرزاق، سکندر، مولانا صاحبزادہ عزیز احمد، مولانا عزیز الرحمٰن جالندھری، مولانا اللہ وسایا، مولانا محمد اسماعیل شجاع آباد، مولانا اکرم طوفانی، مولانا عزیز الرحمٰن ثانی نے قادیانی جماعت کے ترجمان کی جانب سے 1984ءکے امتناع قادیانیت آرڈیننس کو ختم کرنے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے امتناع قادیانیت آرڈیننس مجریہ 1984ءکسی بھی قیت پر ختم نہیں ہونے دیں گے قادیانی جماعت کے ترجمان نے ایسا بیان دے کر آئین پاکستان سے بغاوت کا اعلان کیا ہے۔ قادیانی گروہ نے مسلسل پاکستان کے خلاف زہر اگلا ہے۔