لاہور میں 26 لاکھ کی وارداتیں‘ مزاحمت پر معمر میاں بیوی قتل

لاہور + فیروزوالا (نامہ نگاران) لاہور کے مختلف علاقوں میں ڈاکوئوں اور چوروں نے وارداتوں کے دوران متعدد شہریوں سے لاکھوں روپے کی نقدی، طلائی زیورات، موبائل فون، گاڑیاں و دیگر سامان لوٹ لیا۔ مسلم ٹاؤن میں مزاحمت پر  معمر میاں بیوی کو قتل کر دیا،   اہل علاقہ نے  قاتل کو پکڑ کر  پولیس کے حوالے کر دیا۔ مقتول  ریاض کی اہلیہ کو  پھندا  ڈال کر پنکھے سے  لٹکایا گیا۔ دونوں معمر  میاں بیوی  کی عمر 70 سے 80 سال تھی جبکہ فیروزوالا میں مزاحمت پر فائرنگ سے ماں بیٹے سمیت 3 افراد زخمی ہو گئے۔ مختلف علاقوں سے 4 کاریں اور 6 موٹر سائیکلیں چھین لیں۔ ڈاکوئوں نے جوہر ٹائون کے علاقہ میں کار سوار عمر جاوید سے 16 لاکھ روپے کی کار، لیپ ٹاپ اور نقدی، گلشن اقبال میں زبیر خالد اور اسکی فیملی سے 7 لاکھ 50 ہزار روپے کی نقدی، زیورات اور موبائل فون، شادباغ میں ملک حشمت سے 6 لاکھ کی نقدی و پرائز بانڈز اور موبائل فون، اسلام پورہ میں نعیم خان سے 4 لاکھ 5 ہزار روپے، طلائی انگوٹھی اور موبائل فون، مزنگ میں نعیمہ سے 2 لاکھ 70 ہزار روپے کی نقدی، زیورات اور موبائل فون، لٹن روڈ میں حماد کی فیملی سے 2 لاکھ 50 ہزار روپے کی نقدی اور طلائی کڑا، ستوکتلہ امجد سے ایک لاکھ 70 ہزار اور موبائل فون، گلشن راوی میں سلیمان سے 80 ہزار اور موبائل فون، غازی آباد میں سفیان سے 75 ہزار روپے، موٹر سائیکل اور موبائل فون، فیکٹری ایریا میں عدیل سے 65 ہزار روپے اور موبائل فون، نواب ٹائون میں سعید سے 30 ہزار روپے اور موبائل فون، اقبال ٹائون میں اشرف سے 28 ہزار روپے اور موبائل فون، گڑھی شاہو میں یونس بھٹی سے 10 ہزار روپے اور موبائل فون لوٹ لیا۔ چوروں نے ستوکتلہ سے اسحاق، فیصل ٹائون سے عمران، شفیق آباد سے وسیم کی کاریں جبکہ اسلام پورہ سے امین، گلشن راوی سے احتشام، نواب ٹائون سے خلیل، گارڈن ٹائون سے عبدالرزاق، ہئیر سے شہزاد، پرانی انارکلی سے آصف کی موٹر سائیکلیں چوری کر لیں۔ علاوہ ازیں مسلم ٹاؤن لاہور میں ڈکیتی مزاحمت پر 70 سالہ خاتون کو قتل کر دیا گیا۔ پولیس کے مطابق ڈاکو لوٹ مار کے بعد خاتون کو گلے میں پھندا ڈال کر پنکھے سے لٹکا گئے۔ ننگل ساہداں (مریدکے) ریلوے پھاٹک کے قریب موٹر سائیکل سوار ڈاکوؤں نے گن پوائنٹ پر موٹر سائیکل سوار نور علی، اس کی والدہ خورشید بی بی کو روک کر لوٹ لیا۔ ان سے دو لاکھ دس روپے، موبائل چھین لئے۔ مزاحمت پر ڈاکوؤں نے گولیاں مار کر انہیں زخمی کر دیا اور فرار ہو گئے۔ مریدکے پولیس نے مقدمہ درج کر لیا ہے۔ بیگم کوٹ کے قریب ڈاکوؤں نے ایک سٹور میں گھس کر ڈکیتی کرنے کی کوشش کی۔ سکیورٹی گارڈ رحمت علی نے ڈاکو کو پکڑ لیا۔ ساتھی نے اسے چھڑانے کی خاطر گولی مار کر سکیورٹی گارڈ کو زخمی کر دیا، بغیر لوٹ مار فرار ہو گئے جسے طبی امداد کیلئے ہسپتال داخل کروا دیا، اس کی حالت نازک بیان کی جاتی ہے۔ پولیس نے واقعہ کی رپورٹ درج کر لی۔ شاہدرہ میں ڈاکوؤں کی فائرنگ سے زخمی ہونے والا 45 سالہ رحمت علی زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گیا۔