سنی اتحاد کونسل اور جماعت اہلسنت جمعہ کو ’’امن و محبت اور یکجہتی و رواداری‘‘ کے ایام منائیں گی

لاہور (خصوصی نامہ نگار) سنی اتحاد کونسل پاکستان کے چیئرمین صاحبزادہ حامد رضا نے اعلان کیا ہے کہ سنی اتحاد کونسل فرقہ وارانہ قتل و غارت کے خلاف جمعہ 22 نومبر کو ملک گیر ’’یومِ امن و محبت‘‘ منائے گی، اس روز ملک بھر میں اہلسنّت کی اڑھائی لاکھ مساجد میں ’’اسلام امن و سلامتی کا علمبردار‘‘ کے موضوع پر خطباتِ جمعہ ہوں گے اور جمعہ کے اجتماعات میں واقعہ راولپنڈی کے خلاف مذمتی قراردادیں منظور کی جائیں گی۔ اس بات کا اعلان انہوں نے شیخ الحدیث علامہ محمد شریف رضوی کی قیادت میں ملاقات کرنے والے علما و مشائخ کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ علاوہ ازیں جماعت اہلسنت پاکستان کے مرکزی ناظم اعلیٰ سید ریاض حسین شاہ نے اعلان کیا ہے کہ جماعت اہلسنت جمعہ 22 نومبر کو ملک بھر میں یوم یکجہتی و رواداری منائے گی اور ملک بھر میں امن، برداشت، رواداری اور یکجہتی کے موضوع پر خطبات جمعہ ہوں گے۔ صاحبزادہ حامد رضا نے مزید کہا کہ حکمران امریکی غلامی چھوڑ دیں۔ پاکستان میں امریکی مداخلت فساد کی اصل جڑ ہے۔ امریکی صدر پر جنگی جرائم کا مقدمہ چلنا چاہئے۔ واقعہ راولپنڈی کے ذمہ داران کو قانون کے کٹہرے میں لایا جائے۔ ملک میں آگ اور خون کے کھیل کو روکنے کے لئے قومی قیادت اپنا کردار ادا کرے۔ دریں اثناء علامہ ریاض حسین شاہ نے کہا ہے کہ تمام سیاسی و مذہبی راہنما امن کے ایجنڈے پر متحد ہو جائیں اور میثاقِ امن پر دستخط کریں۔ تمام مکاتب فکر کو واقعہ راولپنڈی پر قائم کئے گئے تحقیقاتی کمشن کی رپورٹ کا انتظار کرنا چاہئے۔