حج پروازیں تاخیر کا شکار‘مسافروں‘ اہل خانہ کو دشواری کا سامنا

لاہور (خبرنگار) شاہین ایئرلائنز کی حج پرواز 12 گھنٹے سے زائد تاخیر سے پہنچنے کی وجہ سے حجاج کرام کو لینے کیلئے آنے والے ان کے عزیزواقارب کو شدید  پریشانی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ خصوصاً لاہور کے باہر دوسرے شہروں سے آنے والے افراد اور ان کے اہل خانہ خصوصاً بچے سردی کی شدت کی وجہ سے پریشان رہے۔ شاہین ایئر لائنز کی حج پرواز صبح ساڑھے پانچ بجے پہنچی تھی جس کی وجہ سے حجاج کرام کو لینے کیلئے آنے والے ان کے عزیزواقارب اپنے شہروں سے صبح 2 اور 3 بجے سردی میں رات کے اندھیرے میں گھروں سے روانہ ہوئے مگر لاہور ایئرپورٹ پہنچنے  پر پتہ چلا کہ پرواز کی آمد میں تاخیر ہے۔ پرواز شام پونے 6 بجے سوا بارہ گھنٹے کی تاخیر سے لاہور پہنچی۔ اس قدر زیادہ تاخیر پر حجاج کو لینے آنے والوں نے ایئرپورٹ پر احتجاج کیا۔ علاوہ ازیں شاہین ایئرلائنز کی جدہ جانے والی پرواز 717 پونے دو گھنٹے کی تاخیر سے شام سات بجکر 15 منٹ پر روانہ ہوئی۔
لاہور (خبر نگار) پی آئی ا ے کا بعد از حج آپریشن 67 ہزار سے زائد حجاج کرام کو خصوصی حج اور شیڈول پروازوں کے ذریعے پاکستان کے مختلف شہروں میں پہنچا کر مکمل ہو گیا۔ بعد از حج آپریشن کا آغاز19 نومبر کو ہوا تھا۔ پی آئی اے کے ترجمان کے مطابق کراچی کے8,198، لاہور کے9,660، اسلام آباد کے14,537 ، پشاور کے15,417 ، کوئٹہ کے 9,754 ، ملتان کے 6,008 اور سیالکوٹ کے 3,527 حجاج کو واپس پہنچایا گیا۔ قبل از حج اور بعد از حج آپریشن کے دوران پروازوں کی بروقت آمدورفت کا نیا ریکارڈ قائم ہو گیا ، جس کے تحت تناسب 90 فیصد سے زائد رہا۔ پی آئی اے ترجمان کے مطابق سعودی سول ایوی ایشن نے پی آئی اے کی جدہ حج ٹرمینل پرحجاج کیلئے فراہم کی جانے والی سہولیات کو سراہتے ہوئے پی آئی اے کو بہترین کارکردگی کا سرٹیفکیٹ دیا اور حج آپریشن کے دوران کسی بھی قسم کی کوئی شکایت بھی موصول نہیں ہوئی۔ پی آئی اے کے چیئرمین محمد علی گردیزی اور منیجنگ ڈائریکٹر محمد جنید یونس نے پی آئی اے ملازمین کو حج آپریشن کے دوران اپنی ذمہ داریاں احسن طریقے سے سر انجام دینے پر مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ وہ قومی ایئر لائن کو منافع بخش بنانے کیلئے بھی اسی محنت اورجذ بے سے کام کریں تو کوئی شک نہیں کہ پی آئی اے بہت جلد اپنے پائوں پر کھڑی ہو جائیگی۔