فنڈز کی کمی‘ پنجاب بھر کے ہسپتالوں میں ادویات کی شدید قلت

لاہور (نیوز رپورٹر) پنجاب بھر کے سرکاری ہسپتالوں میں فنڈز کی عدم دستیابی صوبے کے تمام سرکاری ہسپتالوں کے آﺅٹ ڈور اور اِن ڈور میں ادویات کی شدید قلت پیدا ہو گئی ہے جبکہ ایمرجنسی میں بھی مریض ادویات کے حصول کے لئے خوار ہو رہے ہیں، ہسپتالوں کی مختلف وارڈز دل، ای این ٹی، ایمرجنسی، آئی سی یو، آئی، لیبر، دمہ، گردے، مثانے، ہڈی، بچہ، نیورو اور لیبر وارڈ میں مفت ادویات کے سٹاک ایک ماہ قبل ہی ختم ہو گئے تھے۔ لاہور کے سرکاری ہسپتالوں میو، جنرل، گنگارام، سروسز، لیڈی ولنگڈن، جناح، چلڈرن اور جناح ہسپتال کے آﺅٹ ڈور، اِن ڈور اور ایمرجنسی میں بھی مریض ادویات کے حصول کے لئے خوار ہو رہے ہیں، ہسپتالوں کی مین فارمیسی میں ادویات کے سٹاک انتہائی محدود ہیں، ہسپتالوں میں پینا ڈول، ڈسپرین، مصنوعی سانس لینے کے سلنڈرز اور گلوکوز کی بوتلوں سمیت ڈاکٹرز کے ہاتھوں کے دستانے اور ماسک کی شدید کمی ہے۔ محکمہ صحت پنجاب نے تمام ایم ایس کو ہدایات دی ہوئی ہیں کہ ہسپتال کے آﺅٹ ڈور اور اِن ڈور سمیت تمام وارڈز میں مہیا کی جانے والی ادویات کا چارٹ وارڈز کے باہر آویزاں کیا جائے مگر ابھی تک پنجاب کے کسی بھی ایم ایس نے محکمہ صحت پنجاب کے ان احکامات پر عملدرآمد نہیں کیا ہے۔