پنجاب کی ماتحت عدالتوں سے رواں سال کی کارکردگی رپورٹس طلب

 لاہور (رپورٹ جاوید یوسف) لاہور ہائیکورٹ نے پنجاب بھر کی سیشن، سول، انسداد دہشت گردی اور دیگر خصوصی عدالتوں سے کارکردگی سالانہ تفصیلی رپورٹیں 7 جنوری تک طلب کر لی ہیں۔ ان ہدایات کے مطابق ماتحت عدالتوں کو ن رپورٹوں میں بتانا ہو گا کہ پورے سال کے دوران قتل، ڈکیتی، دہشت گردی، اغواءبرائے تاوان کے کتنے مقدمات کا فیصلہ کیا گیا، کتنے مقدمات میں کتنے ملزموں کو سزائیں ہوئیں اور جو ملزمان بری ہوئے اس کی کیا وجوہات تھیں۔ سنگین نوعیت کے مقدمات میں مفرور ملزموں کے بارے میں تفصیلات اور ان کے ضامنوں کے خلاف کی گئی کارروائی کی تفصیلات بھی طلب کی گئی ہیں۔ یہ بھی بتانا ہو گا کہ صوبے کی جیلوں میں کتنے مقدمات کی سماعت کس کس کے خلاف ہو رہی ہے۔ ان ہدایات کی روشنی میں عدالتوں کے اہلکاروں نے فہرستیں بنانے کا کام شروع کر دیا ہے۔