خسرہ سے مزید 5 بچے جاں بحق، ٹیچنگ سٹاف کی چھٹیاں منسوخ

خسرہ سے مزید 5 بچے جاں بحق، ٹیچنگ سٹاف کی چھٹیاں منسوخ

لاہور + فیصل آباد + میلسی (سپیشل رپورٹر + نیوز رپورٹر + نمائندہ خصوصی) خسرہ کے باعث ہلاکتیں جاری رہیں اور فیصل آباد اور میلسی میں مزید 5 بچے جاں بحق ہو گئے جبکہ سیکرٹری صحت حسن اقبال نے چیف سیکرٹری کی ہدایات کی روشنی میں میڈیکل کالجوں کے ٹیچنگ سٹاف کی گرمیوں کی چھٹیاں منسوخ کرنے کے احکامات جاری کر دئیے ہیں اور میڈیکل افسروں کو 24 گھنٹے موجودگی کو یقینی بنایا جائے۔ تفصیلات کے مطابق میلسی کے ہسپتال میں خسرہ سے 3 بچے جاں بحق ہو گئے۔ جاں بحق بچوں میں بہن بھائی شامل ہیں جبکہ فیصل آباد میں الائیڈ ہسپتال میں خسرہ سے مزید 2 بچے چل بسے جس کے بعد جاں بحق ہونے والے بچوں کی تعداد 40 ہو گئی۔ علاوہ ازیں چیف سیکرٹری پنجاب جاوید اسلم نے ہدایت کی ہے کہ محکمہ صحت کے ماہرین اور دیگر متعلقہ محکموں کے حکام خسرہ کے علاوہ دیگر وبائی امراض گیسٹرو،ڈینگی وغیرہ کی روک تھام کے لئے ہنگامی بنیادوں پر کام کریں اور طویل المدت منصوبہ بندی کے تحت پرائمری ہیلتھ کیئر سسٹم اور حفاظتی ٹیکوں کے پروگرام کو موثر اور فعال بنانے کے لئے اقدامات اٹھائے جائیں۔ انہوں نے یہ بات خسرہ ، گیسٹرو اور ڈینگی کی روک تھام اور مریضوں کے علاج معالجہ کے انتظامات کا جائزہ لینے کے لئے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی۔ وزیر صحت خلیل طاہر سندھو نے کہا کہ خسرہ اورگیسٹرو کے مریض دیگر ضلعوں سے لاہور کے ہسپتالوں میں لائے جا رہے ہیں حالانکہ ان مریضوں کے علاج کے تمام سہولےات ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ز ہسپتالوں میں بآسانی دستیاب ہیں۔ چیف سیکرٹری جاوید اسلم نے کہا کہ بارشوں کی وجہ سے موسم ڈینگی کی افزائش کے لئے موافق ہو گیا ہے لہذا متعلقہ حکام کو وزیر اعلی پنجاب محمد شہباز شریف کی ہدایت اور ماہرین کی گائیڈ لائنز کے مطابق ڈینگی کی روک تھام کے لئے بھی اقدامات جاری رکھنا ہونگے تاکہ یہ مرض سر نہ اٹھا سکے ۔ چیف سیکرٹری نے عوامی نمائندوں کی تجویزپر کہا کہ وہ وزیر اعلی پنجاب سے درخواست کریں گے کہ ہسپتالوں میں خسرہ کے مریضوں کی مانیٹرنگ کے لئے عوامی نمائندوں کی ڈیوٹیاں لگائی جائیں۔ سیکرٹری صحت حسن اقبال نے چیف سیکرٹری کی ہدایات کی روشنی میں میڈیکل کالجوں کے ٹیچنگ سٹاف کی گرمیوں کی چھٹیاںبھی منسوخ کرنے کے احکامات جاری کر دئیے ہیں ۔ ٹیچنگ ہسپتالوں کے پرنسپلز اور ایم ایس کو ہدایت کی گئی ہے کہ خسرہ میں مبتلا مریضوں کو بہترین سہولیات فراہم کی جائیں خسرہ کے علیحدہ وارد تشکیل دینے کے ساتھ وہاں پر میڈیکل افسر چوبیس گھنٹے موجودگی کو یقینی بنایا جائے اسی سلسلہ میں کوتاہی برداشت نہیں کی جائے گی۔ علاوہ ازیں وزیراعلی کی ہدایت پر سیکرٹری صحت حسن اقبال نے گزشتہ شام جناح ہسپتال کا اچانک دورہ کیا اور خسرہ کے زیر علاج بچوں کی خیریت معلوم کی۔ انہوں نے اس موقع پر ایک بچے کے والد مدثر کی شکایت پر ایم ایس ڈاکٹر اعجاز احمد شیخ کو بازار سے منگوائی جانے والی ادویات کے 350 روپے مریض بچے کے والد کو فوری طور پر واپس کرنے کی بھی ہدایت کی۔ حسن اقبال نے کہا کہ میڈیا لوگوں میں شعور بیدار کرنے میں بہت اہم کردار ادا کر رہا ہے۔
خسرہ / 5 بچے جاں بحق