لاہور میں سی این جی ایسوسی ایشن کی جزوی ‘ کئی شہروں میں مکمل ہژتال‘ گیس‘ پٹرول پمپوں کی بندش کیخلاف ہائیکورٹ میں رٹ

لاہور + شیخوپورہ + اسلام آباد (سٹاف رپورٹر + نامہ نگار خصوصی + خبرنگار ) لاہور‘ اسلام آباد‘ راولپنڈی میں سی این جی ایسوسی ایشن اور پٹرول پمپ مالکان کی جزوی‘ فیصل آباد‘ سرگودھا‘ بہاولپور‘ جہلم سمیت متعدد اضلاع میں مکمل ہڑتال ہوئی۔ ساہیوال‘ ٹوبہ اور وہاڑی میں سی این جی سٹیشن مالکان نے ریلیاں نکالیں‘ شیخوپورہ میں کاروبار حسب معمول چلتا رہا۔ ٹیکسی رکشہ مالکان شہریوں سے من مانے کرائے وصول کرتے رہے۔ شہریوں کو آمدورفت میں شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔ تفصیلات کے مطابق لاہور میں سی این جی سٹیشن اور پٹرول پمپ کھلے رہے تاہم ایسوسی ایشن کے عہدیداروں کے پمپ بند رہے، تنظیم نے ہڑتال کامیاب ہونے کا دعویٰ کیا ہے اور کہا کہ آج بھی ہڑتال کرینگے۔ لاہور میں سی این جی فروخت کرنیوالے پمپ مالکان کا کہنا ہے کہ ہم نے بنکوں سے بھاری شرح سود پر قرضے لے رکھے ہیں، ہم انہیں اتاریں یا ہڑتال کریں، ہڑتال سے ٹریفک کا نظام درہم برہم ہو گیا‘ شہری بس سٹاپوں پر دھکے کھاتے رہے۔ شیخوپورہ سے ہمارے نمائندے کے مطابق شہر اور اس کے نواحی علاقوں میں چلنے والے پٹرول پمپوں اور سی این جی سٹیشنوں کے مالکان ہڑتال میں شامل نہیں ہوئے۔ آل پاکستان سی این جی ایسوسی ایشن کے چیئرمین غیاث پراچہ نے کہا کہ پنجاب بھر میں سی این جی سٹیشنوں کی ہڑتال پر حکومت نے اب تک کوئی توجہ دینا تک گوارا نہیں کی اور حکومت کی جانب سے عوام کو پہنچنے والی تکلیف پر اب تک روایتی بے حسی کا مظاہرہ جاری ہے۔
لاہور (وقائع نگار خصوصی) پٹرول اور سی این جی پمپس ایسوسی ایشنز کی طرف سے ہڑتال کرنے کے اقدام کو لاہور ہائیکورٹ کے روبرو چیلنج کر دیا گیا ہے۔ اشتیاق احمد ایڈووکیٹ کی طرف سے دائر کی جانے والی درخواست میں م¶قف اختیار کیا گیا ہے پٹرول اور سی این جی پمپوں کی بندش سے شہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے جبکہ صوبہ بھر میں ٹرانسپورٹ بند ہو کر رہ گئی ہے۔ پٹرول اور سی این جی کی قیمتوں میں اضافے کے باوجود ان مالکان نے اپنے منافع میں اضافے کے لئے پمپ بند کر دئیے ہیں جبکہ حکومت کی طرف سے ابھی تک کوئی کارروائی عمل میں نہیں لائی گئی لہٰذا عدالت کارروائی کرے اور ہڑتال ختم کرنے کے احکامات جاری کرے۔
ہڑتال چیلنج