پارلیمنٹ کی یمن کے مسئلہ پر قرارداد قوم کی ترجمانی نہیں کرتی: حافظ سعید

لاہور (خصوصی نامہ نگار) امیر جماعۃ الدعوۃ حافظ محمد سعید نے کہا ہے کہ سعودی عرب نے ہمیشہ کھل کر پاکستان کا ساتھ دیا اور کبھی غیرجانبدار نہیں رہا، پاکستان کو بھی مصلحت پسندی کا مظاہرہ کرنے کی بجائے برادر اسلامی ملک کی ہر ممکن مدد کرنی چاہیے، پارلیمنٹ کی یمن کے مسئلہ پر قرارداد قوم کے جذبات کی ترجمانی نہیں کرتی۔ پاکستانی عوام اپنے سعودی بھائیوں کے ساتھ ہیں اور حرمین شریفین کے تحفظ کیلئے اپنی جان و مال، اولاد اور سب کچھ قربان کرنے کے لیے تیار ہیں۔ وہ جماعۃ الدعوۃ لاہور کے زیر اہتمام مین المدینہ روڈ ٹائون شپ میں 29ویں سالانہ سیرت النبیؐ کانفرنس اور المحمدیہ سٹوڈنٹس پاکستان کے زیر اہتمام مرکز طیبہ مریدکے میں نظریہ پاکستان کنونشن سے خطاب کر رہے تھے۔ کانفرنس کی صدارت حافظ عبدالماجد سلفی نے کی جبکہ خطاب مولانا سیف اللہ خالد، قاری یعقوب شیخ، مولانا منظور احمد، قاری عبدالرحیم کلیم اور دیگر جبکہ مریدکے میں ہونے والے کنونشن سے سیدہ آسیہ اندرابی (ٹیلیفونک)، انجینئر نوید قمر، عبدالطیف، حافظ محمد مسعود، حمید الحسن، راشد علی، عبدالرحمن سالار اور دیگر نے بھی خطاب کیا۔ نظریہ پاکستان کنونشن میں ملک بھر سے یونیورسٹیز اور میڈیکل کالجز سے تعلق رکھنے والے طلباء کی کثیر تعداد موجود تھی۔ حافظ محمد سعید نے اپنے خطاب میں کہا کہ اس وقت بھی جب حوثی باغی حرمین شریفین پر قبضہ کی دھمکیاں دے رہے ہیں تو ہمیں خاموشی اختیار نہیں کرنی چاہیے بلکہ حوثی باغیوں کے خلاف کارروائی میں سعودی عرب کا کھل کر ساتھ دینا چاہیے۔ ہم پاسبان حرمین شریفین پلیٹ فارم کے تحت بھرپور تحریک چلائیں گے اور مسلمانوں کو بیرونی قوتوں کی سازشوں سے آگاہ کریں گے۔ یمن میں بغاوت ایران اور سعودی عرب کا مسئلہ نہیں اور نہ ہی یہ شیعہ سنی لڑائی ہے۔ صلیبی و یہودی سازش کے تحت اس مسئلہ کو الجھانے کی خوفناک سازشیں کر رہے ہیں۔ اگر پاکستان میں ضرب عضب آپریشن کی حمایت کی جاتی ہے تو پھر حوثی باغیوں کے خلاف کارروائی کی حمایت کیوںنہیں کی جاتی؟ دونوں طرف مسئلہ بالکل ایک جیسا ہے۔ مولانا سیف اللہ خالد، مولانا منظور احمد اور دیگر نے کہاکہ آج صورتحال یہ ہے کہ سارا کفر حرمین شریفین کو نقصان پہنچانے کی کوششیں کر رہا ہے ہمیں اپنے دشمن کو پہچاننا ہوگا۔ نظریہ پاکستان کنونشن سے سیدہ آسیہ اندرابی نے(ٹیلیفونک) خطاب، انجینئر نوید قمر اور دیگر نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ حرمین شریفین کے تحفظ کیلئے ہر مسلمان اپنن تن من دھن قربان کرنے کیلئے تیار ہے۔ تعلیمی اداروں کے طلباء نظریہ پاکستان کے تحفظ کیلئے چلائی جانے والی ملک گیر تحریک میں ہراول دستہ کا کردار ادا کریں گے۔