طالبان سے مذاکرات کیلئے سیاسی و عسکری قیادت سنجیدگی کا مظاہرہ کرے: وسیم اختر

لاہور (ثناء نیوز) ممبر صوبائی اسمبلی و پارلیمانی لیڈر اور امیر جماعت اسلامی پنجاب ڈاکٹر سید وسیم اختر نے کہا ہے کہ موجودہ حکمرانوں نے انتخابات سے پہلے جتنے بھی وعدے قوم کے ساتھ کئے تھے ان میں سے ایک بھی پورا ہوتا نظر نہیں آرہا۔ ملکی ترقی‘ خوشحالی اور استحکام کے لئے مفادعامہ کے فیصلوں پر عملدرآمد کیا جائے۔ طالبان سے مذاکرات کے لئے حکومت اورعسکری قیادت سنجیدگی کا مظاہرہ کرے۔ انہوں نے کہاکہ لوڈشیڈنگ نے عوام کی زندگی اجیرن بنادی ہے۔ دو سال میں لوڈشیڈنگ کا خاتمہ کرنے کا دعویٰ کرنے والے اب پانچ سال کی بات کر رہے ہیں۔ رہی سہی کسر حکومتی وزراء عوام سے جھوٹ بول کر پوری کر رہے ہیں۔ ملک میں توانائی بحران پر قابو پانے کے لئے کالاباغ ڈیم کی تعمیر ناگزیر ہو چکی۔ حکومت مذکورہ ڈیم پر اتفاق رائے قائم کرے۔ کالاباغ ڈیم خالصتاً قومی مفاد کا منصوبہ ہے جسے نادیدہ قوتوں نے سیاسی بنا دیا۔ جماعت اسلامی کے رہنمانے مزید کہاکہ پاکستان درحقیقت مسائلستان بن چکا۔ وسائل سے مالامال ملک کو ناقص حکمت عملی اور 63 برسوں سے لوٹ مار کرنے والوں نے ترقی کی راہ پر گامزن ہی نہیں ہونے دیا۔ ملک میں بلدیاتی انتخابات جلد ہونے چاہئیں۔