لوڈشیڈنگ میں اضافہ، لاہور میں ٹرانسفارمر کی خرابی پر واپڈا دفاترمیں توڑ پھوڑ

لاہور (نیوز رپورٹر+ نامہ نگاران) لاہور سمیت کئی شہروں میں لوڈشیڈنگ میں اضافہ ہونے لگا شہری سراپا احتجاج۔ لاہور میں  دہلی گیٹ کے علاقے میں ٹرانسفارمر کی مسلسل خرابی پر شہریوں نے شدید احتجاج کیا۔ لیسکو سب ڈویژن کے دفتر میں جا کر توڑ پھوڑ کی۔ تفصیلات کے مطابق  داتا دربار ڈویژن کی بھاٹی گیٹ شیرانوالہ گیٹ سب ڈویژنز  میں ٹرانسفارمرز خراب ہیں جس پر گذشتہ روز دہلی گیٹ کے صارفین دونوں سب  ڈویژنز میں گھس گئے۔ لیسکو کے دفاتر میں  شیشے توڑ دئے اور فرنیچر  دفتر سے باہر پھینک دیا۔ صارفین  نے مین  روڈ بلاک کر کے حکومت  کے خلاف نعرے بازی کی۔ لیسکو انتظامیہ  کے مطابق ٹرانسفارمر کا مسئلہ حل کر دیا گیا ہے۔وہاڑی سے نامہ نگار کے مطابق گرمی کی شد ت میں اضافہ کے ساتھ ہی بجلی کی طویل غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے جس سے مریض ، بچے ، بوڑھے اور خواتین کی مشکلات میں اضافہ ہو گیا ، تاجروں کے کاروبار متاثرہونے لگے، بجلی سے کام کرنے والے کاریگر سارا دن فارغ دکھائی دینے لگے، جس پر مختلف افراد سردار اکبر علی ، رانا دلشاد احمد ، حافظ شہزاد ، مقصود احمد خاں، غلام محی الدین ، رانا عبدالمجید ، اصغر علی، ساجد حسین ، شاہد انجم ، اکبر علی، نوید احمد ، محمد رفیق گوندل سمیت دیگر نے احتجاج کر تے ہوئے حکومت سے بجلی کی طویل غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کے خاتمہ کا مطالبہ کیا ہے۔ ٹوبہ ٹیک سنگھ سے نامہ نگار کے مطابق شہر اور گردونواح میں بجلی کی غیراعلانیہ طویل لوڈیڈنگ کا سلسلہ بدستور جاری ہے جبکہ بجلی کی لگاتار کئی کئی گھنٹے بندش نے لوگوں کی زندگی اجیرن بنا کر رکھ دی ہے، گرمی کی شدت میں کمی کے باوجود 16گھنٹے سے زائد لوڈشیڈنگ پر شہری سراپا احتجاج ہیں اور ارباب اختیار سے مطالبہ کیا ہے بجلی کی غیراعلانیہ طویل لوڈشیڈنگ کا سلسلہ فوری ختم کیا جائے۔