بیلف کا چھاپہ، قصور سے 6 بھٹہ مزدور بازیاب، ہائیکورٹ نے رہائی کا حکم دیدیا

لاہور (وقائع نگار خصوصی) لاہورہائیکورٹ نے قرار دیا کہ آئین اور قانون شہریوں سے کسی بھی طرح کی جبری مشقت لینے کی اجازت نہیں دیتا۔ فاضل عدالت نے بیلف کے ذریعے قصورکے بھٹہ مالک کی قید سے بازیاب ہونے والی تین خواتین سمیت چھ افراد کی رہائی کاحکم دیدیا۔گزشتہ روز کیس کی سماعت شروع ہوئی تو عدالت کے روبرو بھٹہ مالک احسن سرورکے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ یہ مزدور نہیں ہیں یہ ڈرامے بازہیں انہوں نے پہلے بھٹہ مالک سے 14لاکھ روپے لئے اور اب عدالت میں جھوٹ بول رہے ہیں ۔بھٹہ مالک کے وکیل کے دلائل پر فاضل عدالت نے برہمی کا اظہار کیا اور اپنے ریمارکس میں بھٹہ مالک کے وکیل سے کہنا تھا کہ لگتا ہے آپ نے لیبر کاقانون نہیں پڑھاقانون کے تحت اب بھٹہ مالک کے خلاف مقدمہ درج ہو گا۔ آپ اپنے دلائل واپس لیتے ہیں یا عدالت بھٹہ مالک کوگرفتارکرنے کاحکم دے جس پر بھٹہ مالک کے وکیل نے عدالت سے معذرت کرکے دلائل واپس لے لئے اور عدالت نے تین خواتین سمیت چھ مزدوروں کو رہا کرنے کاحکم دیدیا۔