بھارت کو پسندیدہ قرار دینا کشمیریوں سے غداری ہے: عبدالغفار روپڑی

لاہور (خصوصی نامہ نگار) جماعت اہل حدیث پاکستان کے امیر حافظ عبدالغفار روپڑی نے کہا ہے کہ حکمران اقتدار کے آخری دنوں میں بھی قوم کےلئے وبال جان بن گئے ہیں، موجودہ حکومت نے بھی سابقہ حکمرانوں کی طرح مسئلہ کشمیر کو نہ صرف سرد خانے میں ڈال دیا بلکہ بھارت کو پسندیدہ ملک قرار دے کر کشمیری بھائیوں کے خون سے غداری کی ہے۔ حافظ عبدالغفار روپڑی نے کہا کہ الیکشن آنے والے ہیں اور عوام کی بہتری کے لئے کام کرنے کی بجائے حکومتی عہدیداران تاریخ سے منہ موڑے بیٹھے ہیں، پہلے گیس کی بندش صرف تین دن تک جاری رہتی تھی اب پورا مہینہ گیس نہیں ملتی۔ ٹرانسپورٹر بے روزگار ہو چکے ہیں اور عوام سڑکوں پر ذلیل و خوار ہو رہی ہے، معیشت کی ترقی کےلئے انتہائی ضروری عنصر ”توانائی“ شدید بحران کا شکار ہے۔ دریں اثناءمولانا مبشر ہزاروی، عبدالوحید روپڑی، عبدالوہاب روپڑی اور مولانا شکیل الرحمن ناصر نے امیر جماعت اسلامی قاضی حسین احمد (مرحوم) کے حوالے سے منعقدہ تعزیتی ریفرنس میں شرکت کی۔