خواتین کے عالمی دن کے حوالے سے صوبائی دارالحکومت تقریبات

خواتین کے عالمی دن کے حوالے سے صوبائی دارالحکومت تقریبات

لاہور (لیڈی رپورٹر) صوبائی دارالحکومت میں خواتین کے عالمی دن کے حوالے سے تحریک انصاف شعبہ خواتین کے زیراہتمام منعقدہ تقریب کی صدارت سلونی بخاری نے کی ، فوزیہ قصوری مہمان خصوصی تھیں۔ مقررین نے صنفی بنیادپراستحصال کی مذمت کرتے ہوئے مطالبہ کیا کہ خواتین کیخلاف جرائم پرمؤثرقانون سازی کی جائے۔ مقررین میں شمسہ علی، رکن پنجاب اسمبلی سعدیہ سہیل، ڈاکٹر سیمی بخاری، سمیرا عابد، تنزیلہ عمران و دیگر شامل تھے۔ دوسری جانب شالیمار کالج برائے خواتین میںسیمینار ہوا۔ صوبائی وزیر ذکیہ شاہنواز نے کہاکہ  خواتین کی شمولیت کے بغیر کوئی معاشرہ ترقی نہیں کر سکتا۔ ڈسٹرکٹ آفیسر کوارڈینیٹر وسیمہ عمر، ایڈووکیٹ حنا حفیظ اور این سی اے کی پروفیسر قدسیہ مقررین میںشامل تھیں۔ لاہور پریس کلب میں الائنس اگینسٹ چائلڈ میرجزکے رہنماؤںنے پنجاب اسمبلی کے کم عمری کی شادیوںکے قانون پرتحفظات کے حوالے سے پریس کانفرنس کی۔ ممتاز مغل، سلمان عابد، افتخارمبارک ،سمیہ یوسف ، عرفان ہوت اور احمر مجید نے کہاکہ 1929کے قانون میں ترمیم تو کر دی گئی مگر اصل مطالبہ اب بھی پورا نہیں کیا صرف جرمانہ اور سزا بڑھا دیا گیا لڑکیوںکی شادی کی عمر کی حد نہیں بڑھائی گئی اسے سولہ سے بڑھا کر اٹھارہ سال کیاجائے۔ دستک کے زیراہتمام تقریب میں ’’خواتین کاتحفظ، احترام کے ساتھ‘‘ کے موضوع پر منعقدہ سلور جوبلی تقریب میں ممتاز قانون دان حنا جیلانی، ویمن کمیشن پنجاب کی چیئرپرسن فوزیہ وقار، روبینہ سہگل، نیلم حسین، فریدہ شہید، شاہ تاج، بشریٰ خالق ودیگر نے شرکت کی مقررین نے مطالبہ کیاکہ خواتین کیخلاف گھریلوتشددکابل منظور کیاجائے اور شیلٹرہومزکوجیل کی طرح نہیں ہوناچاہئے۔ اسلامیہ کالج کینٹ میں پرنسپل ڈاکٹررخسانہ لطافت کی  زیر نگرانی منعقدہ تقریب کی مہمان خصوصی سلمیٰ اعوان تھیں۔ پاکستان عوامی تحریک شعبہ خواتین کے زیراہتمام مرکزی سیکرٹریٹ میںمنعقدہ سیمینار سے خطاب میں مرکزی صدر راضیہ نوید، گلشن ارشاد، نبیلہ ظہیر، افنان بابر، ملکہ صبا نے خطاب کیا۔