.بیت المقدس کو اسرائیلی دارلحکومت قرار دینا سفارتی دہشتگردی ہے: ساجد میر

.بیت المقدس کو اسرائیلی دارلحکومت قرار دینا سفارتی دہشتگردی ہے: ساجد میر

لاہور ( ) امیر مرکزی جمعیت اہل حدیث پاکستان سینیٹر پروفیسر ساجدمیر نے امریکی صدر کی طرف سے مقبوضہ بیت المقدس کو اسرائیل کا دارلحکومت تسلیم کر نے کے اقدام کو سفارتی دہشت گردی قراردیا ہے ۔ دراصل مسلمانوں کے خلاف’’طبلِ جنگ بجایا گیا ہے۔ ہم اسے فلسطین میں قیام امن کی کوششوں کے لئے موت کا پروانہ سمجھتے ہیں ۔امریکہ آگ سے مت کھیلے ، امریکی صدر کے اس اقدام کی وجہ سے خطے میں افراتفری اور خانہ جنگی کا خطرہ ہے ۔ ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت قرار دینا اسلامی دنیا خصوصا عرب دنیا کے لیے بہت بڑا ا لمیہ ہے۔ خطے میں قیام امن کے خواہش مند وں کے لیے بہت بڑا دھچکہ ہے ۔ اس اعلان کے بعد خطے میں امن کی کوششوں کو شدید خطرات لاحق ہوگئے ہیں۔