فیضان، فہیم اور عبادالرحمن کی رسم چہلم، ہزاروں افراد کی شرکت

لاہور+اسلام آباد ( نما ئندہ خصوصی+وقائع نگار خصوصی) لٹن روڈ کے علاقہ میں امریکی شہری ریمنڈ ڈیوس کی فائرنگ اور انہی کی گاڑی تلے آکر جاں بحق ہونے والے تینوں مقتولین کے گھروں میں گزشتہ روز انکی رسم چہلم منعقد کی گئی جس میں سینکڑوں افراد نے شرکت کی۔ مقتولین کے گھروں میں انکی رسم چہلم کے دوران رقت آمیز مناظر دیکھ کر وہاں موجود ہر شخص کی آنکھ نم ہو گئی۔مقتولین کے ورثاءنے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ امریکی ریمنڈ ڈیوس اور اسکے نامعلوم ساتھیوں نے ہمارے پیاروںکا ناحق خون بہایا ہے انھیں ہر گز معاف نہیں کیا جائے گا، مقتولین فہیم، فیضان اور عبادالرحمان کے ورثاءنے سی سی پی او لاہور محمد اسلم ترین کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ واحد افسر ہیں جنہوں نے تمام تر دباﺅ کو نظر انداز کرتے ہوئے امریکیوں کے خلاف مقدمہ درج کر کے ریمنڈ کو گرفتارکیا۔ دوسری طرف آئی ایس آو پاکستان کے سینکڑوں کارکنوں نے لاہور پریس کلب سے مال روڈ پنجاب اسمبلی تک امریکہ کے خلاف ریلی نکالی پنجاب اسمبلی کے باہر ریلی سے خطاب کرتے ہوئے مقررین نے مطالبہ کیا کہ ریمنڈ ڈیوس کو قرطبہ چوک میں سرعام پھانسی دی جائے۔ ریلی کے آخر میں امریکی ، اسرائیلی پرچم اور ریمنڈڈیوس کا پتلا نذر آتش کیا گیا۔دیگر تنظیموں نے بھی امریکہ کیخلاف ریلیاں نکالیں۔علاوہ ازیں فیضان حیدر کی بیوہ زہرہ فیضان نے کہا ہے کہ وہ شجاعت حسین اور پرویزالٰہی کی مشکور ہے کہ انہوں نے مالی امداد اور کفالت کا اعلان کیا۔ ہمیں امریکہ یا کسی دوسرے سے بھیک مانگنے کی ضرورت نہیں نہ ہی ہم اپنے پیاروں کا خون بیچیں گے۔ انصاف نہ ملا تو میں شمائلہ کی طرح اپنی زندگی کا خاتمہ کر لوں گی۔
رسم چہلم