چھٹی کے روز بھی سحر و افطار پر لوڈشیڈنگ‘ کامونکی میں گرمی اور حبس سے دو خواتین جاں بحق

چھٹی کے روز بھی سحر و افطار پر لوڈشیڈنگ‘ کامونکی میں گرمی اور حبس سے دو خواتین جاں بحق

لاہور + کامونکے (نامہ نگاران + آئی این پی) حکو متی دعووں اور اتوار کی چھٹی کے باوجود ملک بھر میں رمضان المبارک میں سحر و افطار پر بھی بجلی کی بدترین لوڈشیڈنگ جاری رہی جس کے باعث روزہ داروں کو شدید مشکلات کا سامنا رہا، جس پر عوام نے حکمرانوں کیخلاف سڑکوں پر شدید احتجاج کیا اور مظاہروںکے دوران شدید نعرے بازی کی گئی۔ کامونکی میں گرمی اور حبس کے باعث 2 خواتین دم توڑ گئیں۔ این ٹی ڈی سی کے ترجمان کے مطابق ملک میں بجلی کی پیداوار 14500میگاواٹ، طلب 17200میگاواٹ جبکہ شارٹ فال 2700میگاواٹ سے زائد ہے۔ شدید گرمی میں ہر گھنٹے بعد ایک گھنٹے کی لوڈشیڈنگ سے صارفین کو شدید مشکلات کا سامنا رہا جبکہ لیسکو نے صارفین کو اے سی کا استعمال کم سے کم رکھنے کی ہدایت کی ہے دوسری طرف ملک بھر میں بجلی کی بدتر ین لوڈشیڈنگ کیخلاف عوام کی جانب سے حکومت کیخلاف احتجاجی مظاہرے کئے گئے۔ سرگودھا سے نامہ نگار کے مطابق سرگودھا محکمہ سوئی گیس کی جانب سے غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ حد سے تجاوز کر گیا جس کے باعث نذیر کالونی کے سینکڑوں مرد، خواتین نے برتن اٹھا کر گیس حکام کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا۔ بورے والا سے نامہ نگار کے مطابق سحری اور افطاری کے وقت بھی بغیر شیڈول لوڈشیڈنگ ہونے لگی۔ منڈی احمد آباد سے نامہ نگار کے مطابق شہر اور گردونواح کے دیہات میں سحری کے وقت بجلی کی لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ جاری رہا۔ شہریوں نے شدید احتجاج کرتے ہو ئے اعلی حکام سے فورا نوٹس لے کر سحری کے وقت بجلی کی لوڈ شیڈنگ ختم کرنے کا پر زور مطالبہ کیا ہے۔ ادھر کامونکے میں گزشتہ روز نواحی گائوں گھنیاں کی 60 سالہ نویدہ بی بی اور سموبالہ کی 55 سالہ خالدہ بی بی گرمی کے باعث بے ہوش ہوگئیں جن کو طبی امداد کے لئے مقامی ہسپتال پہنچایا جارہا تھا کہ وہ راستے میں ہی دم توڑ گئیں۔ شیخوپورہ سے نامہ نگار خصوصی کے مطابق شہر اور اسکے نواحی علاقوں میں شدید گرمی کے باوجود لوڈشیڈنگ کے شیڈول میں کوئی تبدیلی نہیں کی گئی اور بدستور12تا 14گھنٹے بجلی کی لوڈشیڈنگ جاری رہی اور کئی علاقوں میں افطاری اور سحری کے وقت بھی بجلی کی بندش کے باعث شہریوں کو کھانوں کی تیاری کیلئے شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔ چوک پریس کلب سمیت تین مقامات پر شہریوں نے بجلی کی لوڈشیڈنگ کے خلاف احتجاجی مظاہرے کئے اور سخت نعرہ بازی کی۔ محلہ احمد پورہ منظور سٹریٹ میں ہونے والے مظاہرہ کے دوران درجنوں شہریوں نے احتجاجاً بجلی کے بلوں کو بھی نذر آتش کردیا۔
لوڈشیڈنگ/ 2 خواتین جاں بحق